مقبول خبریں
راچڈیل مساجد کونسل کی طرف سے مئیر کونسلر محمد زمان کی مئیر چیرٹیز کیلئے فنڈ ریزنگ ڈنر کا اہتمام
اوورسیز پاکستانیوں کے لئے خصوصی سیل بنایا جانا چاہئے: سلیم مانڈوی والا
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
برطانیہ میں آباد تارکین وطن کی مسئلہ کشمیر پر کاوشیں قابل تحسین ہیں:چوہدری محمد سرور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
برطانیہ میں مقیم کشمیری و پاکستانی 16مارچ کو بھارت کے خلاف مظاہرہ کریں گے: راجہ نجابت حسین
وہ بے خبر تھا سمندر کی بے نیازی سے!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
بیس جون تک تصفیہ کشمیر کا روڈمیپ پیش کریں گے،میرواعظ کا اعلان
سرینگر:حریت کانفرنس کے چیئرمین میرواعظ عمرفاروق نے 20جون کومسئلہ کشمیرکے حل کا روڈ میپ پیش کرنیکا اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ 5خطوں پرمشتمل ریاست جموں وکشمیر کا پورا خطہ متنازعہ ہے ۔ انہوں نے جموںوکشمیرکوخالصتاً سیاسی اور انسانی مسئلہ قراردیتے ہوئے کہاکہ لسانی ، علاقائی یا مذہبی بنیادوں پر تقسیم کی ہر کوشش کو ناکام بنایا جائیگا۔ کشمیرمیڈیاسروس کے مطابق میر واعظ نے سرینگرمیں ایک عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ وادی کشمیر ،جموں ، لداخ ،آزاد کشمیر اور گلگت بلتستان مشتمل ریاست جموںو کشمیرکے عوام کے سیاسی مستقبل کاتعین ہونا ابھی باقی ہے ۔ میر واعظ نے کہا کہ نریندر مودی کی قیادت میں بھارت کی نئی حکومت جموں وکشمیر کی وحدت کو پارہ پارہ کرنا چاہتی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جموںو کشمیر کے لوگ بھارتیہ جنتاپارٹی حکومت کے مذموم عزائم کو ہرگز پورا نہیں ہونے دیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ 6دہائیوں سے زائد وقت گزر جانے کے با وجود مسئلہ کشمیر کا تاحال حل نہ ہونا افسوس ناک ہے ۔ میر واعظ نے کہا کہ مسئلہ کشمیر حل نہ ہونے کی وجہ سے کشمیری عوام شدید مصائب اور مشکلات کا شکار ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر کے متنازعہ ہونے کا ایک بڑا ثبوت اقوام متحدہ کی قراردادیں ہیں۔میرواعظ نے کہا کہ یہ بڑے افسوس کی بات ہے کہ مفاد پرست عناصر جموں وکشمیر کی وحدت کو نقصان پہنچانے کی سازشوں میں مصروف ہیں اور علاقے کو علاقائی، لسانی اور مذہبی بنیادوں پر تقسیم کرنے کے در پے ہیں۔میر واعظ نے افسوس کا اظہار کیا کہ پاکستان اور بھارت گزشتہ ساٹھ برس کے دوران مسئلہ کشمیر کے حل کیلئے کوئی روڈ میپ اور لائحہ عمل مرتب کرنے میں ناکام رہے ۔ حریت چیئرمین نے کشمیریوں سے اپیل کی کہ وہ اپنی صفوں میں اتحاد واتفاق کومزید مضبوط بنائیں تاکہ دشمن کے مذموم عزائم کو ناکام بنایا جاسکے ۔ انہوں نے کہا کہ عوامی ایکشن کمیٹی کی گولڈن جوبلی تقاریب کے سلسلے میں 20جون کوسرینگر کے میونسپل پارک میں ایک تاریخی جلسہ منعقد کیا جائے گا جس میں کل جماعتی حریت کانفرنس کی طرف سے مسئلہ کشمیر کے حل کے حوالے یک اہم قرار داد پاس کی جائے گی۔