مقبول خبریں
جامع مسجد اولڈہم میں جشن عیدمیلادالنبیؐ کے حوالہ سے محفل کا انعقاد ،حامد سعید کاظمی و دیگر کی شرکت
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
مولانا قاضی عبدالعزیز چشتی کے سسر مرحوم کے چہلم پراجتماع،پیر عبدالقادر شاہ گیلانی کی دعا
لوٹن ... مرکزی جماعت اہلسنّت برطانیہ و یورپ کے بانی و سرپرست اعلیٰ علامہ ڈاکٹر پیر سید عبدالقادر شاہ گیلانی نے کہا ہے کہ اسلام ایک مکمل ضابطہٴ حیات اور قرآن پوری انسانیت کیلئے ہدایت و رہنمائی کا ضامن اور سرکار مدینہ سرور کائنات نبی پاک سارے جہانوں کیلئے رحمت بن کر آئے اور آپ کے سارے صحابہ کرام آسمان رشد و ہدایت کے روشن و منور ستارے اور بارگاہ رسالت مآب سے براہ راست فیض یافتہ تھے۔ وہ جامعہ اسلامیہ غوثیہ لوٹن میں مولانا قاضی عبدالرشید چشتی کے زیر انتظام ہونے والے اُن کے سسر مولانا قاضی غلام رحمن قادری کے چہلم پر ایک بڑے اجتماع سے خطاب کررہے تھے۔ انہوں نے ایصال ثواب کے حوالے سے قرآن مقدس اور احادیث مبارکہ سے استدلال پیش کرتے ہوئے کہا کہ کچھ ایسے نیک اعمال بھی ہیں جو مرنے کے بعد ایک بندہ مومن کیلئے اس کی بخشش و نجات کا سبب بن جاتے ہیں۔ اُن میں صدقہ جاریہ، علم نافع اور نیک و صالح اولاد بھی شامل ہیں۔ مرکزی جماعت اہلسنّت برطانیہ و یورپ کے سینئر رہنما اور سابق سیکرٹری جنرل علامہ قاضی عبدالعزیز چشتی نے کہا کہ آج علمائے کرام کی یہ اہم ذمہ داری ہے کہ برطانیہ و یورپ کے آزاد ماحول اور معاشرے میں پروان چڑھنے والی نوجوان نسل کو اپنے خطبوں کے ذریعہ والدین کے حقوق اور اُن کے ساتھ وفا اور اُن کے ادب و احترام اور اُن کے ساتھ اعلیٰ حسن سلوک کرنے کے بارے میں آگاہ کریں۔ مولانا علامہ قاری واجد حسین چشتی خطیب جامعہ الاکبریہ نے کہا کہ والدین کی خدمت سے نہ صرف اس دنیا میں عزت ملتی ہے بلکہ اُن کی خدمت و اطاعت حصول جنت کا بھی سبب اور ذریعہ ہے۔ اس نورانی اور روحانی تقریب و جلسہ کا آغاز قاری محمد شعیب، حافظ محمد کامران کی تلاوت قرآن پاک حاجی محمد تمریز اور مولانا قاری طارق محمود کی نعت سے ہوا جبکہ مولانا قاضی عبدالرشید چشتی، مولانا حافظ خلیفہ محمد اشتیاق قادری نے بارگاہِ رسالت مآب میں ہدیہ نعت پیش کیا۔ جن دیگر نے اظہار خیال کیا اُن میں کونسلر محمد ریاض بٹ، ملک محمد اکرم، ملک محمد شبیر، محمد عقیل قادری، نثار احمد راٹھور، ڈاکٹر نور دین ملک، کونسلر راجہ محمد اسلم، راجہ مشتاق خان، راجہ عبدالرشید، راجہ نذیر حسین عباسی، الحاج بابو اللہ دتا، خلیفہ الحاج محمد محفوظ بٹ، خلیفہ محمد حنیف نقشبندی و دیگر کثیر تعداد میں سماجی و سیاسی مذہبی رہنما شامل تھے۔ آخر میں پیر ڈاکٹر سید عبدالقادر شاہ گیلانی نے اجتماعی دعا کرائی۔