مقبول خبریں
عبدالباسط ملک کے والدحاجی محمد بشیر مرحوم کی روح کے ایصال ثواب کیلئے دعائیہ تقریب
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
میاں جی کی لڑکیاں
پکچرگیلری
Advertisement
انڈین کشمیر،گرفتار نوجوان کی رہائی کیلئے ہڑتال جاری،مظاہرے،جھڑپیں
سرینگر ...مقبوضہ کشمیر کے بارہمولہ بانڈی پورہ اور سوپور قصبو ں میں گرفتاریوں اورتوڑ پھوڑ کے خلاف اتوار کو مسلسل چوتھے روز بھی ہڑتال اور احتجاج جاری رہا جس کے نتیجے میں معمول کی زندگی مفلوج ہو کررہ گئی۔کشمیر میڈیا سروس کے مطابق بھارتی فوجیوں اور پولیس اہلکاروں کے ہاتھوں نام نہاد انتخابات سے قبل اور اس کے بعدنوجوانوں کی گرفتاریوں، چھاپہ مار کارروائیوں اور گھروں میں توڑ پھوڑ کے خلاف لوگ ہڑتال اور احتجاج کر رہے ہیں ۔بانڈی پورہ میں ہڑتال کے باعث کاروبارزندگی ٹھپ ہوکر رہ گیا جب کہ سڑکوں سے ٹریفک غائب رہی۔نوپورہ چوک میں ہزاروں مشتعل افراد نے احتجاجی مظاہرے کئے ، مختلف علاقوں میں سیکیورٹی فورسز پر پتھرائو کیا گیا جبکہ درجنوں اہلکار زخمی ہوگئے ٗپولیس نے مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے وحشیانہ لاٹھی چارج کیا ، لوگوں کا کہنا ہے کہ ہڑتال اس وقت تک جاری رہے گی جب تک تمام گرفتار نوجوانوں کو رہا اور بھارتی فورسز کے ہاتھوں توڑ پھوڑ سے مکانوں کو پہنچنے والے نقصان کا معاوضہ نہیں دیا جاتا۔دریں اثناء قصبے سے مزید 8نوجوانوں کو گرفتار کر لیا گیا ہے ، مسلم لیگ کے ترجمان نے سرینگر میں جاری ایک بیان میں کہا کہ مسرت عالم بٹ کو گزشتہ رات ایک بجے تھانہ بارہمولہ سے تھانہ شہید گنج سرینگر منتقل کردیا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ قابض انتظامیہ مسرت عالم کو غیر قانونی طور نظر بند رکھ کر انتقام کا نشانہ بنا رہی ہے ، ادھر سرینگر میں چیف جوڈیشل مجسٹریٹ نے پولیس کووامق فاروق قتل کیس میں ملزمان کی گرفتاری کیلئے خصوصی ٹیم تشکیل دینے کا حکم دیا ہے ۔ کم عمر وامق فاروق 31جنوری2010کو سرینگر کے علاقے راجوری کدل میں غنی میموریل سٹیڈیم کے نزدیک بھارتی پولیس اہلکارو ں کی طرف سے پھینکے گئے آنسوگیس کا گولہ سر میں لگنے کے باعث شہید ہو اتھا۔ اس کیس میں مزید کارروائی چار جون کو ہو گی ۔