مقبول خبریں
آشٹن گروپ کی جانب سے پوٹھواری شعر و شاعری کی محفل،شعرا نے خوب داد وصول کی
مشتاق لاشاری سی بی ای کا پورٹریٹ کونسل ہال میں لگا نے کی تقریب، بیگم صنم بھٹو نے نقاب کشائی کی
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
منکرین ختم نبوتؐ کے بارے مسلمانوں باالخصوص علماء کرام کو نہایت چوکنارہنے کی ضرورت ہے
مانچسٹر ... عقیدۃ تحفظ ختم نبوتؐ کے مسئلہ پر تمام مسلمان ایک ہیں۔ مسلمانوں کی صفوں میں منکرین ختم نبوتؐ اور منکرین حدیث گُھس کر ایسی شرمناک کارروائیاں کررہے ہیں جس سے اسلام اور مسلمانوں پر دھبہ لگتا ہے اور بدنامی ہوتی ہے ۔ ضرورت اس بات کی ہے کہ ہمیں اپنے ارد گرد نظر رکھنی ہوگی۔ مسلمانوں کی صفوں میں شامل ایسی کالی بھیڑوں کو نکال باہر پھینکنا ہوگا، جو عقیدہ ختم نبوتؐ اور احادیث نبویہؐ کے حوالے سے امت مسلمہ کے اجماعی عقیدہ کے خلاف نظریات رکھ کر اسلام کے بارے میں اپنے مخصوص نظریات و خیالات کو پھیلا رہے ہیں، کچھ لوگ بڑی بے شرمی سے مسلمانوں کی شناخت کو چوری کرکے خود کو مسلمان اور اسلام کا خیرخواہ تصور کروا کر سادہ لوح مسلمانوں کے ایمانوں کو خراب کررہے ہیں۔ ایسے حالات میں علماء کرام اور کمیونٹی لیڈروں کی مذہبی ذمے داریاں بڑھ جاتی ہیں، کچھ لوگ مسلمانوں کے درمیان مخصوص فروعی مسائل کو ہوا دیکر بھی اپنے مذموم عزائم کو آگے بڑھاتے ہیں۔ ایسے وقت میں تمام مکاتب فکر کے مسلمانوں باالخصوص علماء کرام کو نہایت چوکنارہنے کی ضرورت ہے۔ تاکہ منکرین ختم نبوتؐ و منکرین حدیث اور دیگر باطل نظریات کے حامل لوگ، مسلمانوں کو تقسیم در تقسیم کرنے میں کامیاب نہ ہوسکیں۔ ان خیالات کے اظہارمتحدہ مجلس تحفظ ختم نبوتؐ کی اپیل پر مختلف شہروں میں خطابات کرتے ہوئے۔ علما کرام ڈاکٹر علامہ خالد محمود، مولانا عبدالرشید ربانی، مولنا عبدالرحمن باوا، مولانا قاری تصور الحق، مولانا قاری عبدالرشید، مولانا سہیل باوا، مفتی عبدالوہاب، مولنا محمد اکرم، مولانا اسلام علی شاہ، مولانا جمال بادشاہ مولنا شفیق الرحمن ، مولناا محمد احسن اور دیگر نے کیا۔