مقبول خبریں
سیرت النبیؐ کے پیغام کو دنیا بھر میں پہنچانے کے لئے میڈیا کا کردار اہم ہے:پیر ابو احمد
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
مقبوضہ کشمیر،بھارتی فورسز کے ہاتھوںنوجوان کی ہلاکت کیخلاف ہڑتال،مظاہرے
سرینگر...حریت کانفرنس کی اپیل پرنواکدل میں بھارتی فورسز کے ہاتھوں 22سالہ نوجوان بشیر احمد بٹ کی ہلاکت اور خاتون شاخساز کو زخمی کرنے کے خلاف مقبوضہ وادی میں بدھ کو ہڑتال کی گئی ، کاروباری مراکز بند ، سڑکوں پر ٹریفک معطل رہی ، عوام نے بھارت کے خلاف مظاہرے کئے جبکہ فورسز نے مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے طاقت کا وحشیانہ استعمال کیا ، آج نماز جمعہ کے بعد پرامن مظاہرے کئے جائیں گے ، کشیدہ صورتحال کے پیش نظر انتظامیہ نے جمعرات کو سرینگر کے کئی علاقوں میں کرفیو نافذ کئے رکھا ۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق انتخابی بائیکاٹ مہم کے دوران مقبوضہ کشمیرمیں بھارتی پولیس نے جموں و کشمیر لبریشن فرنٹ کے ضلع کپواڑہ کے صدر محمد رفیق وار کو گرفتار کرلیا جبکہ چیئرمین محمدیاسین ملک، ایڈووکیٹ بشیر احمد بٹ،شوکت احمد بخشی، بشیر کشمیری،امتیاز احمد بٹ، اشرف بن سلام، بشیر احمد راتھر (بویا)،ارشد احمد بٹ جان،غلام رسول ہزاروی،غیاث الدین، شیخ عبدالغفار،محمد حنیف ، محمد رمضان صوفی ،مشتاق احمد پہلے سے گرفتار ہیں ۔گرفتاریوں کے باوجود جموں و کشمیر لبریشن فرنٹ نے نام نہاد انتخابات کے بائیکاٹ کی مہم زور و شور سے جاری رکھی ہوئی ہے اور اس سلسلے میں تنظیم کے رہنمائوں فاروق احمد ڈار ،عبدالمجید اور دیگر نے جمعرات کو بُڈن رفیع آباد،مرازی گنڈ رفیع آباد،درسو رفیع آباد اور کچلہ قاضی گنڈ کپواڑہ کا دورہ کرکے لوگوں کو انتخابات سے دور رہنے کی تلقین کی ،اس موقع پرانتخابا ت کے بائیکاٹ سے متعلق تحریری مواد بھی تقسیم کیا گیا،ادھر سید علی گیلانی نے کہا کہ بھارتی فورسز کے ہاتھوں نوجوان کی ہلاکت بھارت کی نام نہاد جمہوریت پر ایک بدنما داغ ہے ۔ حریت کانفرنس کے سربراہ میرواعظ عمر فاروق نے کہا کہ بھارت کشمیریوں کو گولیوں کا نشانہ بنا کر اپنا مقصد حل کرنے میں کبھی کامیاب نہیں ہو سکتا ، تحریک آزادی آخری دم تک جاری رہے گی ، لبریشن فرنٹ کے چیئرمین یاسین ملک ،ترجمان حریت کانفرنس شبیر احمد ڈار نے بھی بھارتی فوج کے ہاتھوں نوجوان کی ہلاکت کی مذمت کی ہے ۔