مقبول خبریں
مکس مارشل آرٹ کونسل اور چیریٹی آرگنائزیشن کے زیر اہتمام تقریب کا انعقاد
بریگزیٹ بحران :کنزرویٹو پارٹی کی تین خواتین ممبر کی آزاد گروپ میں شمولیت
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
میں روشنی سے اندھیرے میں بات کرتا ہوں!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
مقبوضہ کشمیر،جھڑپوں کے دوران3مجاہدین شہید،میجر سمیت2بھارتی فوجی ہلاک
سرینگر... مقبوضہ کشمیرکے ضلع شوپیاں میں بھارتی فوجیوں اور مجاہدین کے درمیان ایک جھڑپ میں تین نوجوان شہید اور ایک میجر سمیت دو بھارتی فوجی ہلاک ہو گئے ۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق مجاہدین اور بھارتی فوجیوں کے درمیان جھڑپ کریوہ مانلومیں ہوئی جس کے بعد لوگوں کی بڑی تعداد سڑکوں پر نکل آئی اور بھارت مخالف مظاہرے کئے۔ مظاہرین نے آزادی کے حق میں اور بھارت کے خلاف فلک شگاف نعرے لگائے۔ ادھر نوجوانوں کی گرفتاریوں کے خلاف پلوامہ اور شوپیا ں میں مکمل ہڑتال کی گئی۔ پلوامہ میں بڑی تعداد میں فوجیوں اور پولیس اہلکاروں کو تعینات کیا گیا تھا ۔تاہم لوگوں نے پلوامہ کے مختلف علاقوں ٹہاب چوک، مرن چوک اور راج پورہ چوک میں مظاہرے کئے۔ مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے بھارتی پولیس نے آنسو گیس استعمال کرنے کے ساتھ ہوا ئی فائرنگ کی ۔ مقامی افراد نے میڈیا کے نمائندوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ نام نہاد انتخابی عمل کے بعد بھارتی فوجیوں نے گھروں میں گھس کر لوگوں کو تشدد کا نشانہ بنایا۔ انہوں نے کہا کہ فوجی اہلکاروں نے نہ صرف قیمتی سامان کو تہس نہس کردیا بلکہ خواتین کوبھی تشدد کا نشانہ بنایا۔ ضلع پلوامہ کے علاقے ترال میں بھی مظاہرہ کیا گیا۔ فوجیوں اور پولیس اہلکاروں نے مظاہرین کو منتشر کرنے کیلئے طاقت کا وحشیانہ استعمال کیا۔