مقبول خبریں
چوہدری مطلوب کی رہائشگاہ پر جشن عیدمیلادالنبیؐ کی محفل ،نوجوانوں کی بڑی تعداد میں شرکت
پاکستان اور بھارت کے درمیان سب سے بڑا مسئلہ کشمیر کا حل ہے: چوہدری فواد حسین
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
نواز علی کی رہائش گاہ پرحضرت غوث اعظم شیخ عبد القادر جیلانیؒ کے سالانہ عرس پرمحفل کا انعقاد
مرغی آنڈے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
مقبوضہ کشمیر :بھارتی انتخابات ، گرفتاریوں کیخلاف مظاہرے ، پولیس کا لاٹھی چارج ، متعدد زخمی
سری نگر ...مقبوضہ کشمیر میں چھاپوں اور حالیہ گرفتاریوں کے خلاف سوپور اور شوپیاں میں سینکڑوں افراد نے احتجاجی مظاہرے کئے ۔بھارتی فورسز نے مظاہرین کو منتشر کرنے کے لئےآنسو گیس کے گولے داغے اور لاٹھی چارج کیا جس کے نتیجے میں متعدد افراد زخمی ہوگئے۔ رپورٹ کے مطابق سوپور میں اس وقت کشیدگی پھیل گئی جب مشتعل نوجوانوں نے سکیورٹی اہلکاروں پر پتھرائو کیا ۔ ادھر ضلع بانڈی پورہ کے سعدہ نارہ علاقہ میں نوجوانوں کے ایک گروپ نے نیشنل کانفرنس کے سینئر لیڈر اور اعلیٰ تعلیم کے وزیر محمد اکبر لون کی طرف سے منعقدہ انتخابی جلسہ کو منتشر کرنے کے لئے پتھرائو کیا ۔کشمیر میڈیا سروس کے مطابق بھارت نواز سیاسی کارکنوں کے قتل کے بعد حزب المجاہدین کے 8کارکنوں کی گرفتاری کے خلاف ترال میں مکمل ہڑتال کی گئی ۔علاقے میں دکانیں اور کاروباری مراکز بند رہے جبکہ سڑکوں پر گاڑیوں کی آمد و رفت معطل رہی ۔ دریں اثناء بارہمولہ قصبے میں دو مجاہد کمانڈروں تنویر احمد اور امتیاز احمد کی چھٹی برسی کے موقع پر مکمل ہڑتال کی گئی۔ جموں وکشمیر لبریشن فرنٹ کے رہنمائوں سراج الدین داؤد،شیخ خالد،مشتاق احمد خان، پروفیسر جاوید، بشیر احمد راتھر اورغلام رسول ہزاروی نے انتخابی بائیکاٹ مہم کے دوران سرینگر ، بڈگام اور بارہمولہ میں لوگوں سے انتخابات کے بائیکاٹ کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ بھارت نواز سیاستدان کشمیریوں پر بھارتی مظالم میں برابر کے شریک ہیں،نام نہاد انتخابات نے آج تک کشمیریوں کوپبلک سیفٹی ایکٹ، آرمڈ فورسز سپیشل پاورز ایکٹ اور دیگر کالے قوانین کے سوا کچھ نہیں دیا، بزرگ حریت رہنماسید علی گیلانی نے الیکشن کا مکمل بائیکاٹ کرنے کی اپیل دہراتے ہوئے کہا ہے کہ نام نہاد انتخابات کشمیریوں کے حق خودارادیت کا نعم البدل نہیں ہو سکتے،انہوں نے اپنے بیان میں کہا کہ عوام پولنگ کے دن گھروں میں رہیں اورنماز مغرب کے بعد احتجاجی مظاہرے کریں ۔