مقبول خبریں
اولڈہم کے نوجوانوں کی طرف سے روح پرور محفل، پیر ابو احمد مقصود مدنی کی خصوصی شرکت
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
لندن میراتھن میں کامیابی خرم محبوب نے فل میراتھن میں چھبیس میل کا فاصلہ چار گھنٹے میں طے کر لیا
ہائی ویکب...سابق چیئرمین محبوب حسین بھٹی کے بیٹے خرم محبوب نے لندن میں ہونے والی فل مارتھن میں حصہ لیا اور چھبیس میل کا فاصلہ چار گھنٹے میں طے کر کے اپنا فل مارتھن دوڑنے کا خواب مکمل کیا،یاد رہے اس مارتھن ریس میں اپنے اپنے خوابوں کی تکمیل کیلئے دو افراد ہلاک بھی ہوئے تھے اور کئی ہزار اس ریس کو مکمل نہ کر سکے تھے خرم محبوب نے اس سے قبل نادرن ریس میں حصہ لینے کے علاوہ بکنگھم شائر میں بیسویں ہاف مارتھن رنز میں حصہ لیا اور اس طرح چیرٹی کو سپورٹ کرنے کا ان کے اندر جذبہ اور بڑھا،خرم محبوب نے لندن میں ہونے والی فل مارتھن ریس شام کیلئے چیرٹی کے پلیٹ فارم سے حصہ لیا تاکہ شام میں جاری خون آشام خانہ جنگی میں متاثر ہونے والے لوگوں کی مدد کیلئے فنڈز اٹھا سکیں،خرم محبوب نے کہا کہ ان کا مقصد اس طرح کی مارتھن میں حصہ لے کر چیریٹز کیلئے فنڈز اکٹھے کرنا ہیں اور دوسرا اپنے آپ کو فٹ رکھنے کیلئے بھی میں اس دوڑ میں حصہ لے رہا ہوں،خرم محبوب نے کہا کہ اس سے قبل بھی انہوں نے کئی ایک مشہور دوڑوں میں حصہ لیا مگر فل لندن مارتھن میں کامیابی سے دوڑنا ان کا خواب تھا جس کے لئے انہوں نے خوب محنت کی اور اپنے لئے ایک وقت کا ٹارگٹ بھی مقرر کیا،خرم محبوب نے کہا کہ گو انہوں نے جو سوچا تھا وہ تین گھنٹے میں مارتھن مکمل کر لیں گے جو نہ ہو سکا مگر پھر بھی مارتھن میں کامیاب ہونا ان کے لئے اعزاز سے کم نہیں ہے، مجسٹریٹ و کونسلر محبوب حسین بھٹی نے کہا کہ ان کیلئے دوستی کی بات ہے کہ ان کا بیٹا چیئرٹیز کیلئے ان سپورٹس ایونٹ میں حصہ لے رہے ہیں اور یہ چھبیس میل کا فاصلہ طے کرنا کوئی معمولی کام نہیں ہے،انہوں نے کہا کہ والدین کیلئے اس لئے زیادہ اور خوشی کی کیا بات ہو سکتی ہے کہ ان کی اولاد ایسے کھیلوں میں حصہ لے اور اپنا مقام معاشرے میں بنائے،چیئرمین محبوب حسین بھٹی نے کہا کہ کشمیری و پاکستانی کمیونٹی کے نوجوانوں کو اس طرح کے کاموں میں بڑھ چڑھ کر حصہ لینا چاہئے تاکہ کمیونٹی کی نیک نامی کے ساتھ ساتھ وہ برائیوں سے بھی بچے رہیں،خرم محبوب نے نوجوانوں کو پیغام دیتے ہوئے کہا کہ انسانی جسم کو ذہنی و جسمانی طور پر اعلیٰ مقاصد کیلئے وقف کرنے اور اپنے لئے ہمہ وقت چیلنجز سامنے رکھ کر ہی زندگی میں کوئی مقصد حاصل کیا جا سکتا ہے،خرم محبوب بھٹی نے کہا کہ انہوں نے چوبیس میل کا فاصلہ جسمانی زور بقیہ دو میل کا فاصلہ جہاں ان کے ارد گرد گوتھک کر گر رہے تھے اپنی قوت ارادی کے زور پر طے کیا،ہائی ویکب کی کمیونٹی اور دوستوں و احباب نے بھٹی فیملی کو خرم محبوب بھٹی کے اس کارنامے پر مبارک باد دی ہیں،راجہ ظفر اللہ خان صدر مسجد کمیٹی راجہ انعام اللہ،چوہدری آفتاب،اسماعیل چوہدری،چوہدری عجائب حسین،راجہ نائب خان و دیگر نے خرم محبوب کو مبارک باد دیتے ہوئے کہا کہ انہوں نے غیر معمولی کارنامہ سر انجام دے کر ثابت کیا کہ آپ اچھے انسان اور بہترین سپورٹس مین ہیں۔