مقبول خبریں
اولڈہم ٹاؤن میں پہلی جنگ عظیم کی صد سالہ تقریب،جم میکمان،مئیر کونسلر جاوید اقبال و دیگر کی شرکت
مشتاق لاشاری سی بی ای کا پورٹریٹ کونسل ہال میں لگا نے کی تقریب، بیگم صنم بھٹو نے نقاب کشائی کی
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
گناہوں کی زندگی کو چھوڑ کر اچھا راستہ اپنانے والے نوجوانوں کے اعزاز میں تقریب ، کونسلر عمران مہمان خصوصی
بریڈفورڈ.... دنیاوی مصیبتوں میں گھر کر منشیات کے استعمال کے عادی نوجوانوں کو راہ راست پر لانے کے پروجیکٹ “میجک“ کی سالانی تقریب ہوئی جس میں بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کرنے والے لڑکوں اور لڑکیوں مین اسناد تقسیم کی گیئں۔ ۔ مہمان خصوصی کونسلر عمران حسین جو بریڈ فورڈ کونسل کے ڈپٹی لیڈر بھی ہیں انہوں نے میجک سکیم کے نوجوانوں کو خراج تحسین پیش کیا۔ انہوں نے کہا کہ میں نے نوجوانوں سے جو وعدہ کیا تھا اس کو پورا کردیا ہے۔ میجک کے اس پروجیکٹ کے لیے گرلنگٹن سینٹر کو 1.5 ملین فراہم کررہے ہیں، تاکہ نوجوان جو کرمنل لائف، بیرو زگار، ڈرگ یا دوسرے کرائم میں ملوث ہورہے ان کو راہ راست پر لایا جاسکے۔ میجک سکیم کے تحت 72 نوجوان لڑکے اور لڑکیاں جو انتہائی رسک پر تھیں ان کو سیدھے راستے پر لاکر بہت بڑا کارنامہ انجام دیا ہے۔ آج یہی نوجوان یونیورسٹیوں میں اعلیٰ ڈگریاں حاصل کرکے معاشرے میں باعزت طور پر جانے جاتے ہیں۔ کونسلر عمران حسین نے کہا کہ ان کی نوجوانوں کے لیے خدمات پر نیشنل ایوارڈ بھی ملا ہے۔ وہ نوجوانوں کے ساتھ قریبی رابطہ میں ہیں۔ انہوں نے کہا کہ کوئی بھی نوجوان پیدائشی برا نہیں ہوتا، اس کو ماحول ہی برا بنادیتا ہے۔ ہمیں سب کے ساتھ مل کر ماحول کو صاف ستھرا بناتے ہوئے نوجوانوں کی سپورٹ کرنا ہوگی۔ دین اسلام کی طرف لانا ہوگا تاکہ اسلام کے سنہری اصولوں کو وہ رول ماڈل بناتے ہوئے معاشرے کے اچھے شہری بنیں۔ اس موقع پر چیف سپرنٹنڈنٹ سائمن ریکٹز نے دی میجک اور عرفان نصیر کی کمیونٹی کے نوجوانوں کے لیے کاوشوں کو سراہا اور کہا کہ پولیس ینگ نوجوانوں اور سوسائٹی سے ڈرگ اور گینگ کلچر کو ختم کرنے کے لیے ہر اس اقدام کی بھرپور سپورٹ کرے گی اور ان کے ساتھ مل کر کام کرے گی۔ تقریب میں پولیس کے اعلیٰ عہدے داروں نے بھی شرکت کی۔ نوجوان خوش و خرم نظر آرہے تھے کہ وہ گناہوں کی زندگی کو چھوڑ کر ایک اچھی زندگی شروع کررہے ہیں۔ اس موقع پر 6 لڑکیوں جن کا 6 میجک گرل کا نام دیا گیا۔ ان میں مسلمان لڑکیاں انیسہ مالک، ندا شیرازی، علی شاہ اور رابعہ نے کہا کہ وہ گھر کے ماحول اور مثبت رول ماڈل نہ ہونے کی وجہ سے بے راہ روی کی طرف چل نکلی تھیں۔ انہوں نے کہا کہ اگر گھر میں کسی لڑکی کا بھائی ڈرگ میں یا کسی اور غیر معاشرتی سرگرمیوں میں ملوث ہو تو اس کا گھر پر اثر پڑتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ لڑکیاں بھی اسی راہ پر چل نکلتی ہیں۔ میجک سکیم کے تحت ہمیں اچھی زندگی اور بری زندگیوں کو قریب سے دکھایا گیا۔ جیل، پولیس اور دیگر اداروں کے متعلق عملی طور پر دکھایا گیا۔ جس کو دیکھ کر ہم خوف زدہ ہوگئے اور توبہ کرلی۔ اس موقع پر 32 سالہ عرفان نصیر نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ وہ پانچ سال کی عمر میں والد کی موت کی وجہ سے یتیم ہوگئے، مگر ماحول کی وجہ سے بہت بڑا گینگ لیڈر بن گیا۔ ڈرگ ڈیلنگ اور دیگر برے کاموں میں نکل کھڑا ہوا۔ ابھی میری عمر 21 سال ہی تھی تو میں 9 سال کے لیے جیل کی سلاخوں کے پیچھے چلا گیا۔ 9 سال جیل کے دوران مجھے پچھتاوا ہوا تو میں نے طے کرلیا کہ خود بھی توبہ کروں گا اور دوسرے نوجوانوں کو بچانے کے لیے جہاد کروں گا۔ وہ پرنس چارلس کی چیرٹی کے ساتھ منسلک ہوگیا اور دی میجک کے تحت ان نوجوانوں کو راہ راست پر لانے کے لیے ان کے ساتھ اپنا تجربہ شیئر کرتا رہا جس سے کئی نوجوان تائب ہوکر اچھی زندگی کی طرف لوٹ آئے۔ میجک سکیم کے تحت 72 سے زائد نوجوان لڑکوں اور لڑکیاں جو ڈرگ سیکس گرومنگ میں ملوث تھیں ان کو معاشرے کا اچھا شہری بنادیا۔ عرفان نصیر عرف ناز نے پولیس کا بھی شکریہ ادا کیا کہ وہ میرے اس کام میں میری بھرپور سپورٹ کرتی ہے۔ وہ اپنی بری زندگی کے تجربات سے نوجوانوں کو سبق دیتے ہیں۔تقریب میں انسپکٹر سٹیفن ڈوڈ، انسپکٹر رچرڈ بیلڈن، انسپکٹر ٹام ہارنر، بلا سنگھ جو ایریا کوآرڈینیٹر ہیں کے علاوہ کمیونٹی اور نوجوان طبقے کی خاصی تعداد نے شرکت کی۔ محمد محمود اور مسعود گوندل سے تحسین کا اظہار کیا جنہوں نے کمیونٹی کے اہم فنکشن کے انعقاد کیلئے بھرپور کوششیں کیں اور کامیابی حاصل کی۔ اس موقع پر علی شاہ مالک، انیسہ مالک، ندا شیرازی، عینی شیرازی، رابعہ باہم، ڈیون فلپس، جوڈی سمتھ، ثناء خان، عائشہ الحلو اور نور الحلو کو کونسلر عمران حسین اور سائمن ایٹکنز نے خصوصی ایوارڈ دیے۔