مقبول خبریں
سیرت النبیؐ کے پیغام کو دنیا بھر میں پہنچانے کے لئے میڈیا کا کردار اہم ہے:پیر ابو احمد
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
ایسوسی ایشن آف پاکستانی لائرز کی دس سالہ تقریب کمیونٹی خدمات پر تعریفی اسناد دی گئیں
مانچسٹر... ایسوسی ایشن آف پاکستانی لائرز کی دس سالہ تقریبات کے خصوصی موقع پر ممبر آف یورپین پارلیمنٹ اور ایتھک کمیٹی کے چیئرمین ڈاکٹر سجاد حیدر کریم کی پاکستان اور برطانوی کمیونٹیز کی خدمات کوخراج تحسین پیش کرنے کیلئے مقامی ریسٹورنٹ میں ایک پر وقار استقبالیہ دیا گیا،نظامت کے فرائض میڈیا کی مشہور شخصیت ثمینہ خان نے سر انجام دیئے،خدا وند کریم کے بابرکت نام سے آغاز ہوا،اسکی سعادت جاوید اقبال کو نصیب ہوئی،ڈاکٹر سجاد حیدر کریم نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ برطانیہ کے دفاع اور ترقی میں برصغیر کے لوگوں کا کردار مثالی ہے اور دوسری جنگ عظیم میں جرمن فوج کا ڈٹ کر مقابلہ کرنے کے صلہ میں پاکستانی نژاد حکم داد کو وکٹوریہ کراس کے اعزاز سے نوازا گیا کیونکہ انہوں نے انسانیت کی خدمت کی ہمیں اپنے لئے اس مثال کو مشعل راہ بنانا چاہئے،انہوں نے کہا کہ جی۔ایس ۔پی پلس سے صحیح معنوں میں فائدہ اٹھانے کیلئے پاکستانی اور برٹش کمیونٹی کا کاروباری رابطہ اشد ضروری ہے،انہوں نے زور دے کر کہا کہ برٹش پاکستانیوں پر بھاری ذمہ داری عائد ہوتی ہے کہ وہ برطانیہ کی سلامتی اور ترقی میں اپنا بھرپور کردار ادا کریں اور اس ضمن میں سکائش ریفرنڈم اور یورپین یونین کے الیکشن انتہائی اہم ہیں،یوکے کو ایک اکائی رکھنا انتہائی اہم ہے اور اگر سکاٹ لینڈ ایک خود مختار ملک بن گیا تو اس سے فیڈریشن کمزور ہو گی اور اس کا بہت بڑا اثر کامن ویلتھ کی جغرافیائی حیثیت پر بھی پڑھ سکتا ہے،ا نہوں نے کہا عالمی سطح پر معیشت عدم استحکام کا شکار ہے اور اس کی زد میں پاکستان بھی آیا ہوا ہے لہٰذا ہم کو حقیقت کو تسلیم کرتے ہوئے معیشت کی بہتری کیلئے مثبت اقدامات اٹھانا ہونگے اور پاکستان کی بہتری کیلئے ذاتی نظریات و اختلافات کو بالائے طاق رکھتے ہوئے مادر وطن کی سلامتی اور ترقی کیلئے اجتماعی کاوشیں کرنی ہونگی،انہوں نے کہا کہ پاکستانی برٹش گو کہ کاروباری،تعلیمی لحاظ سے برطانیہ میں پیچھے ہیں لیکن سیاست کے عملی میدان میں ایوان زیریں سے لیکر ایوان بالا تک تمام بڑے عہدوں پر براجمان ہیں اور آنے والے وقت میں باقی شعبہء جات میں بھی ترقی کی منزلیں طے کرتے ہوئے نام روشن کرینگے،آخر میں انہوں نے پاکستان کی سلامتی اور ترقی کیلئے نیک خواہشات کا اظہار کیا،راچڈیل لائرز ایسوسی ایشن کے صدر اور ایسوسی ایشن آف پاکستانی لائرز کے روح رواں بیرسٹر امجد ملک نے کہا کہ دوہری شہریت اور اوورسیز پاکستانیوں کی جائیدادوں کو قبضہ گروپ اور لینڈ مافیا اور دیگر مسائل کو اجاگر کرنے میں الیکٹرانک اور پرنٹ میڈیا کا کردار اہمیت کا حامل ہے،پاکستانی معیشت کے حوالے سے انہوں نے کہا کہ اس وقت کساد بازاری ہے اور اگر ملک کو امداد سے نجات دلوانی ہے تو پھر تجارت کو فروغ دینا ہو گا اور اسکے لئے حکومت کو ملکی حالات میں استقام لانے کی اشد ضرورت ہے تاکہ جی ایس پی پلس کی سہولت سے فائدہ اٹھا کر ملک کے اندر روزگار کے مواقع پیدا کئے جائیں،انہوں نے پاکستان کے عدالتی نظام کے حوالے سے کہا کہ عدالتوں کے اندر کیس کی سماعت اور فیصلہ چھ ماہ کے اندر ہونا چاہئے معاشرے کی تہذیب انصاف میں پنہاں ہے،بیرسٹر ندیم احمد نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پاکستانی کمیونٹی برطانیہ کے اندر تمام شعبہ جات میں نمایاں حیثیت کے ساتھ موجود ہے اسے مزید بہتر بنانے کی ضرورت ہے،ڈاکٹر حفیظ نے کہا کہ ہم سب پاکستان کے سفیر ہیں،بچوں کی تعلیم پر خصوصی توجہ دینی چاہئے،پاکستان مسلم لیگ ن یوکے کے صدر زبیر گل نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ملک میں مارشل لا اور سیاسی حکمرانوں کی غلط پالیسیوں کی وجہ سے آج پاکستان مشکل ترین دور سے گزر رہا ہے ماضی کی غلطیوں سے سیکھ کر مستقبل سنوارنے کیلئے ہم سب کو مل کر مخلصانہ کوششیں کرنا ہونگی اور ہم تارکین وطن ملک کی ترقی کیلئے موجودہ حکومت کے ساتھ کندھے سے کندھا ملا کر شانہ بشانہ کھڑے ہیں،مقامی ٹی وی کے چیئرمین ڈاکٹر لیاقت ملک نے کہا کہ ہم اقلیتوں کے حقوق سے غافل ہیں انہوں نے کہا کہ وکلاء کا کردار اہم ہے کیونکہ اس دنیا کے سب سے بڑے منصف اور وکیل ہمارے پیارے نبیؐ تھے ہم ان کے بتائے ہوئے احکامات کی روشنی میں زندگی کے ہر شعبے میں ترقی کیلئے مشعل راہ بنانا چاہئے،پاکستان قونصلیٹ مانچسٹر کے قونصل جنرل ڈاکٹر ظہوراحمد نے کہا کہ اوورسیز پاکستانی ملک کیلئے قابل احترام ہیں اور انکی ذمہ داری ہے کہ وہ بیرون ممالک رہتے ہوئے پاکستان کی اصل روح و تصویر کا رُخ پیش کریں تاکہ وقارمیں اضافہ ہو،انہوں نے کہا چیریٹی سیکشن میں تمام آرگنائزیشن کا کام مثالی اور لازوال ہے،لارڈ میئر مانچسٹر کونسلر نعیم الحسن نے اپنے خطاب میں مختصر الفاظ میں کہا کہ بانی پاکستان قائد اعظم کے قول اتحاد،ایمان اور تنظیم کو اپنا شعار بنا کر اس پر عمل پیرا ہونا چاہئے،تقریب سے پاکستان مسلم لیگ برطانیہ کے چیئرمین راجہ آفتاب شریف نے بھی خطاب کیا،اولڈہم کے نامزد ڈپٹی میئر کونسلر عتیق الرحمن،مختلف طبقہ ء فکر کے احباب نے بھرپور شرکت کی،آخر میں نمایاں کارنامہ سر انجام دینے والوں کے اعزاز میں ایسوسی آف پاکستانی لائرز کی جانب سے قونصل جنرل ڈاکٹر ظہور احمد نے تعریفی اسناد پیش کیں۔ (بیورو رپورٹ: فیاض بشیر)