مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
برطانیہ میں آزاد کشمیر کے روائتی کھیل بینی بازی کا مقابلہ راجہ بشارت نے جیت لیا
لوٹن ... بیرون ممالک میں اپنی ثقافت کو کھیلوں جیسی سرگرمیوں سے زندہ رکھنا انتہائی مشکل ہوتا ہے، لیکن برطانیہ میں آزاد کشمیر سے تعلق رکھنے والے کئی بزرگ ایسے بھی ہیں جنکی محنت سے یہاں کبڈی اور بینی بازی جیسے مقابلے بھی ہوتے رہتے ہیں۔ ایسا ہی ایک مقابلہ کشمیری اکثریتی چہر لوٹن میں ہوا جسکے مہمان خصوصی ممبر کشمیر کونسل چوہدری محمد خان تھے۔ برطانیہ بھر سے اس کھیل سے دلچسپی رکھنے والے افراد نے بڑی تعداد میں شرکت کی۔ ہائی کمیشن پاکستان کے سابق کمیونٹی ویلفئیر منسٹرراجہ ثالث کیانی، لندن کی ممتاز سماجی شخصیت الحاج راجہ اللہ دتہ ، صدر پاکستان مسلم لیگ نواز آزاد کشمیر برطانیہ راجہ زبیر اقبال کیانی، ن لیگ یوتھ کے راجہ فضارت کیانی، پاکستان پیپلز پارٹی کے لالہ چوہدری محمد تاج سمروڑ، الحاج چوہدری محمد نواز، شاہد زمان، ثراب تاج، ممبر کشمیر کونسل چوہدری محمد خان، مسلم کانفرنس کے جنرل سیکرٹری برطانیہ کونسلر محمد ریاض بٹ، کونسلر چوہدری محمد ایوب، کونسلر راجہ محمد سلیم، ن لیگ کے ہمسٹیڈ سے راجہ آصف سردار مرتضے راجہ بشارت جونئیر چوہدری الیاس (لیڈز) راجہ یعقوب، سمیت 15 سو کے قریب افراد نے شرکت کی۔ مختلف پہلوانوں کے درمیان مقابلے ہوئے۔ فائنل مقابلہ لوٹن کے راجہ بشارت اور نارتھ سے آئے ہوئے چوہدری محمود الحسن کے درمیان ہوا۔ راجہ بشارت جو پہلے سے ہی گولڈ بیلٹ رکھتے ہیں نے مقابلہ جیت کر اعزاز برقرار رکھا۔ لوٹن کے چوہدری اسد پہلوان اور چوہدری ضیاء لیڈز کے درمیان مقابلہ برابر رہا۔ دیگر مقابلے لوٹن کے راجہ زاہد اور بریڈ فورڈ کے چوہدری عمر، راچڈیل کے راجہ اعجاز اور بریڈ فورڈ کے راجہ امجد، لوٹن کے چوہدری ربنواز اور والسال کے چوہدری سفارش، لوٹن کے چوہدری سہیل اور ڈیوز برا کے راجہ وسیم، لوٹن کے راجہ رقیب اور ڈیوزبری کے راجہ کامران، چوہدری کاشر لوٹن، راجہ عباس ڈیوز بری، ٹیلفورڈ کے راجہ مقدس اور ڈیوز بری کے راجہ ندیم کے درمیان انعقاد پذیر ہوئے ۔ آخر میں کامیاب کھلاڑیوں میں انعامات اور ٹائٹلز تقسیم کئے گئے۔