مقبول خبریں
دار المنور گمگول شریف سنٹر راچڈیل میں جشن عید میلاد النبیؐ کے حوالہ سےمحفل کا انعقاد
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
کون بنے گا صدر پاکستان،کس کو ملے گی پانچ سال تک صدارت
اسلام آباد… پاکستان کا صدر کون بنے گا، ن کے ممنون حسین یا تحریک انصاف کے وجیہ الدین احمد، فیصلہ منگل کو ہوجائے گا۔ ن لیگ کے وفد نے اپنے امیدوار کی حمایت کے لیے آفتاب شیر پاوٴ اور مولانا فضل الرحمان کا دروازہ کھٹکھٹادیا،دوسری جانب پیپلز پارٹی نے سندھ اور خیبر پختون خوا اسمبلی کے بائی کاٹ کا بھی فیصلہ سنادیا۔ کون بنے گا صدر پاکستان،کس کو ملے گی پانچ سال تک صدارت کی کرسی،یہ فیصلہ ہونے میں اب صرف ایک دن باقی،پولنگ اسٹیشنز کا درجہ ملے گا پارلیمنٹ ہاوٴس اسلام آباد اور چاروں صوبائی ایوانوں کو، مد مقابل ہوں گے نون کے ممنون حسین اور تحریک انصاف کے جسٹس ریٹائرڈ وجیہہ الدین احمد، شہر اقتدار اسلام آباد میں لیگی رہنما اپنے امیدوار کی حمایت کے لیے سیاسی رہنماوٴں کے در پر پہنچے، مولانا فضل الرحمان سے ملاقات ہوئی تو مولانا نے حمایت کرنے یا نہ کرنے کا فیصلہ آج ہونے والے پارٹی اجلاس پر چھوڑ دیا۔ قومی وطن پارٹی کے چیئرمین آفتاب احمد خان شیر پاوٴ سے بھی صدارتی انتخاب میں حمایت کی درخواست کی گئی،آفتاب شیر پاوٴ نے حمایت کو آج پارٹی رہنماوٴں سے ہونے والی مشاورت سے مشروط کردیا۔ دوسری جانب پاکستان پیپلز پارٹی ہم خیالوں کے ساتھ بائیکاٹ کے راستے پر چل پڑی ہے۔ وزیر اطلاعات سندھ شرجیل میمن نے30 جولائی کو سندھ اسمبلی کے اجلاس میں شرکت نہ کرنے کا فیصلہ سنادیا،شرجیل میمن کہتے ہیں کہ وزیر اعظم نواز شریف کو ریموٹ کنٹرول آدمی چاہیے، ممنون حسین بھی رفیق تارڑ ثابت ہوں گے، الیکشن کمیشن نے انتخاب کے دوران ارکان پارلیمنٹ پر پولنگ بوتھ میں موبائل فون اور کیمرہ لے جانے پر بھی پابندی عائد کردی ہے، الیکشن کمیشن کے مطابق یہ اقدامات صدارتی انتخاب میں خفیہ رائے دہی کو یقینی بنانے کے لئے کئے گئے ہیں۔