مقبول خبریں
چوہدری سعید عبداللہ ،چوہدری انور،حاجی عبدالغفار کی جانب سے حاجی احسان الحق کے اعزاز میں عشائیہ
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
میاں جی کی لڑکیاں
پکچرگیلری
Advertisement
سعودی عرب میں اعلیٰ عہدوں پر فائز 620 سرکاری افسروں کی ڈگریاں جعلی یا مشکوک
ریاض… جعلی ڈگریاں صرف پاکستان کا ہی مسلہ نہیں بلکہ سعودی عرب میں سرکاری افسروں کی جعلی ڈگریوں کا اسکینڈل سامنے آیا ہے۔ مختلف محکموں کے 620 افسران کی ڈگریاں جعلی ثابت ہوگئیں۔ کارروائی کے خوف سے 2 ہزار سے زائد سرکاری عہدے داروں نے ریٹائرمنٹ کی درخواست کردی۔سعودی میڈیا کے مطابق محکمہ تعلیم اور دیگر محکموں کی جانب سے سرکاری عہدے داروں کی ڈگریوں کی جانچ پڑتال کی مہم جاری ہے۔ مہم کے دوران اب اتک اعلیٰ عہدوں پر فائز 620 ایسے سرکاری افسروں کا انکشاف ہوا ہے جن کی ڈگریاں جعلی یا مشکوک ہیں۔ ان افسروں میں سے 234 عہدے داروں کی ڈاکٹریٹ کی ڈگریاں بھی جعلی ہیں۔ جعلی اور مشکوک ڈگری والوں میں 5 مختلف محکموں کے انڈر سیکرٹری، ڈائریکٹر اور جنرل انڈر سیکرٹری شامل ہیں۔ سعودی میڈیا کے مطابق جعلی ڈگری کے خلاف کارروائی کے خوف سے تقریباً 2 ہزار سرکاری افسروں نے قبل از وقت ریٹائرمنٹ کی درخواست دے دی ہے۔