مقبول خبریں
مکس مارشل آرٹ کونسل اور چیریٹی آرگنائزیشن کے زیر اہتمام تقریب کا انعقاد
بریگزیٹ بحران :کنزرویٹو پارٹی کی تین خواتین ممبر کی آزاد گروپ میں شمولیت
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
میئرآف لوٹن (برطانیہ) نے شاہد حسین سید کو کمیونٹی سروسز پر شیلڈ پیش کی
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
راجہ نجا بت حسین کی صدر آزاد کشمیر سردار مسعود اور وزیر اعظم راجہ فاروق حیدر سے ملاقات
میں روشنی سے اندھیرے میں بات کرتا ہوں!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
الیکشن کمیشن کا کردار شرمناک ، سپریم کورٹ سے انصاف کی امید ہے ،عمران خان
اسلام آباد۔ پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہا ہے عوامی مینڈیٹ چرانے والوں کیخلاف غداری کا مقدمہ چلنا چاہئے‘ الیکشن کمیشن کا کردار شرمناک ہے‘ سپریم کورٹ سے امید ہے کہ وہ انصاف دے گی‘ انتخابات میں مرضی کے امپائر مقرر کرکے تاریخی دھاندلی کی گئی‘ جہاں مجرموں کو سزائیں نہیں ملتیں وہاں جرم پھلتا ہے‘ سابق چیف جسٹس افتخار محمد چوہدری کے اقدامات سے مایوسی ہوئی‘ چور ڈاکوئوں کو پارلیمنٹ میں داخل ہونے سے نہ روکا گیا تو جمہوریت کو خطرات لاحق ہوجائیں گے‘ اگر قانونی راستے بند ہوگئے تو پھر ہم سڑکوں پر ہوں گے‘ ہم تمام شہر کو بند کردیں گے‘ الیکشن کمیشن کا کام شفاف انتخابات کرانا تھا جو نہیں کرائے گئے۔نئے چیئرمین نادرا کو ہم نہیں جانتے کہ وہ کون ہیں ہمیں پرانے چیئرمین پر اعتماد تھا۔ منگل کو سپریم کورٹ کے باہر میڈیا سے گفتگو کرتے چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان نے کہا کہ پاکستان کی تاریخ میں دھاندلی کے حوالے سے ہم نے جو کیس عدالت میں دائر کیا ہے یہ نہایت ہی اہم کیس ہے۔ پاکستان میں ابھی تک صاف و شفاف الیکشن نہیں ہوئے۔ صاف و شفاف ووٹوں کے بغیر ملک میں جمہوریت نہیں آسکتی۔ انہوں نے کہا کہ حالیہ انتخابات میں الیکشن کمیشن کا کردار شرمناک ہے۔ ہمیں اب الیکشن کمیشن سے نہیں صرف سپریم کورٹ سے امیدیں وابستہ ہیں کہ وہ چار میں سے دو حلقوں میں الیکشن کی تصدیق کروائیں‘ دیکھتے ہیں کہ عدالت کیا فیصلہ دیتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ خوشاب کے ضمنی انتخابات میں تاریخ ساز دھاندلی کی گئی ہے الیکشن کمیشن نے لوگوں کا مینڈیٹ چرایا تھا۔ عوامی مینڈیٹ چرانا بھی آئین کی خلاف ورزی ہے۔ آئین کی خلاف ورزی کرنے والوں کیخلاف بھی غداری کا مقدمہ چلنا چاہئے اور آئین کے آرٹیکل 6 کے تحت ان کیخلاف فوری کارروائی ہونی چاہئے۔