مقبول خبریں
کشمیر سالیڈیرٹی کیلئے یکم فروری سے 11فروری تک تقریبات منعقد کرائی جائیں گی
پیپلزپارٹی کے رہنما ندیم اصغر کائرہ کی پریس کانفرنس ،صحافیوں کے سوالات کے جوابات دیئے
واجد خان ایم ای پی کا آزاد کشمیر سے آئے حریت کانفرنس کے رہنمائوں کے اعزاز میں عشائیہ
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے زیر اہتمام پہلی کشمیر کلچرل نمائش کا اہتمام
دسمبر بے رحم اتنا نہیں تھا!!!!!!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
کشمیریوں پرظلم ڈھاتے بھارت کی بربریت اورمکروہ چہرہ اقوام عالم کے سامنے ہے:مولانا بوستان القادری
برمنگھم ...کشمیریوں کو مذاکرات کا کہہ کر بہت وقت گذار لیا گیا، اس دوران کسی کا کچھ نہیں بگڑا مگر کشمیریوں کی مسلسل نسل کشی ہوتی رہی ہے، دمیا نے خود دیکھ لیا ہے کی یہ قوم تھکنے والی نہیں، اس لئے ہم بار بار کہتے ہیں کہ ہمارے صبر کا مزید امتحان نہ لیا جائے اور ہمارا پیدائشی حق خود ارادیت ہمیں دیا جائے۔ ان خیالات کا اظہار برمنگھم کے کشمیری رہنمائوں نے بھارت قونصلیٹ کے باہر احتجاجی مظاہرے اور ازاں بعد یوم یکجہتی کے حوالے سے منعقدہ ایک تقریب میں کیا۔ تقریب کی نظامت برمنگھم کے نامزد لارڈ میئر شفیق شاہ نے کی۔ کونسلر وسیم ظفر، کونسلر عنصر علی خان اور راجہ اشتیاق احمد نے خصوصی طور پر تقریب میں شرکت کی۔کل جماعتی کشمیر رابطہ کمیٹی کے رہنمائوں نے کہا کشمیر پر بھارت کا جابرانہ قبضہ اور ظلم و تشدد کو کشمیری زیادہ دیر برداشت نہیں کرسکتے۔ یوم یک جہتی کی تحریک ملی بیداری کی تحریک ہے اس کی اہمیت و افادیت ایک مسلمہ حقیقت ہے۔ سپریم ہیڈ مولانا محمد بوستان القادری نے کہا کہ بھارت کی بربریت روز روشن کی طرح عیاں ہے۔ ظلم برداشت کرتے کرتے کشمیریوں کا پیمانہ صبر لبریز ہو چکا ہے۔ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں، اجتماعی قبریں، خواتین کی بے حرمتی سے بھارت کا مکروہ چہرہ اقوام عالم کے سامنے ہے۔ تحریک آزادی کشمیر کی چنگاری آتش فشاں بن کر پھٹنے والی ہے جس سے جنوبی ایشیا کو اپنی لپیٹ میں لے لے گا۔ مقررین نے کہا یو این او اور عالمی طاقتوں کو کشمیریوں کے حقوق جو بین الاقوامی چارٹر تسلیم شدہ میں پاس کرنا چاہئے جبکہ نصف صدی سے زائد عرصہ ہو چکا ہے بھارت حکومت ناجائز جبر و تشدد کے ہتھکنڈے آزما چکی ہے وہ کشمیریوں کے جذبہ حریت کو سرد نہیں کرسکا۔ کشمیر رابطہ کمیٹی کے سیکرٹری جنرل نائب حسین مغل نے کہا کہ گزشتہ ربع صدی سے رابطہ کمیٹی برطانیہ کے بین الاقوامی پلیٹ فارم سے احتجاجی ریلیوں اور مظاہروں کا بندوبست کرکے بھرپور احتجاج کررہی ہے اور مطالبہ کررہی ہے کہ کشمیریوں کو حق خود ارادیت دلایا جائے۔ مقررین نے کہا 7/7، 11/11 سے سبق سیکھنا چاہئے عالمی سیاسی حالات بدل چکے ہیں۔ بھارت کو کشمیر رابطہ کمیٹی کے کوآرڈینیٹر تحریک کشمیر یورپ کے صدر محمد غالب نے کہا اقوام متحدہ اور او آئی سی جیسے اداروں کو اپنی ذمہ داریوں سے عہدہ برآ ہونا چاہئے۔ بھارتی حکومت پر دبائو بڑھانا چاہئے کہ مقبوضہ کشمیر میں دہشت گردی ختم کرے اور کشمیریوں حق خود ارادیت دے۔ بھارتی قونصل جنرل کو ایک یادداشت پیش کرنے والوں میں مولانا بوستان القادری، نائب حسین مغل سیکرٹری، محمد غالب کو آرڈینیٹر، شہزاد اقبال، ایوب سرکھوی، راجہ عبدالقیوم، عبداللطیف مغل شامل تھے۔