مقبول خبریں
جموں کشمیر نیشنل عوامی پارٹی برطانیہ برانچ کے زیرِ اہتمام فکر مقبول بٹ شہید ورکز یونیٹی کنونشن کا انعقاد
قاضی انویسٹ منٹ کی جانب سے وطن کی محبت میں ڈیم فنڈ کیلئے ایک لاکھ پائونڈ عطیہ کا اعلان
تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے ساتھ ملکر کشمیر کانفرنس کا انعقاد کرینگے :کرس لیزلے و دیگر
ڈیم سے روکنے کی کوشش پر غداری کا مقدمہ چلے گا: چیف جسٹس پاکستان
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
پاکستان سے تشریف لائے ممبر پنجاب اسمبلی فیاض احمد وڑائچ کا دورہ منہاج ویلفیئر فائونڈیشن
ہم دھوپ میں بادل کی، درختوں کی طرح ہیں!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
پاکستان کشمیریوں کو حق خودارادیت ملنے تک ان کا پورا ساتھ دے گا،صدر اور وزیراعظم پاکستان کا یوم یکجہتی کشمیر پر پیغام
اسلام آباد۔ صدر مملکت ممنون حسین اور وزیراعظم نوازشریف نے حکومت پاکستان اور عوام کی طرف سے کشمیریوں کی سیاسی‘ سفارتی اور اخلاقی حمایت جاری رکھنے کے عزم کا اعادہ کرتے ہوئے کہا ہے کہ اقوام متحدہ اور عالمی بردری کشمیریوں سے کئے گئے وعدے کی پاسداری کرتے ہوئے مسئلہ کشمیر حل کرائے‘ بھارت کو جامع اور نتیجہ خیز مذاکرات کی دعوت دیتے ہیں تاکہ کشمیر سمیت تمام مسائل حل کئے جائیں‘ پاکستان کشمیریوں کو حق خودارادیت ملنے تک ان کا پورا ساتھ دے گا۔ یوم یکجہتی کشمیر پر اپنے پیغام میں صدر نے کہا کہ ہر سال 5 فروری کو یوم یکجہتی کشمیر کے موقع پر ہم اپنے کشمیری بھائیوں کے بنیادی حقوق بشمول حق خودارادیت کیلئے اپنی اخلاقی‘ سیاسی اور سفارتی حمایت کی تجدید کرتے ہیں۔سلامتی کونسل کی قراردادیں اور اقوام متحدہ کا منشور ان حقوق کی مکمل پاسداری کرتے ہیں۔ صدر نے کہا کہ آج پاکستان کے عوام ان کشمیری بھائیوں اور بہنوں کی اپنے حق خودارادیت کیلئے جراتمندانہ جدوجہد کو خراج تحسین پیش کرتے ہیں جنہوں نے اس جدوجہد میں بے شمار قربانیاں دی ہیں۔ وزیراعظم نے اپنے پیغام میں کہا کہ پاکستان کی حکومت اور عوام یوم یکجہتی کشمیر منا رہے ہیں۔ یہ وہ موقع ہے جب م جموں و کشمیر کے عوام کی اپنے حق خودارادیت کے لئے جدوجہد کی مکمل حمایت کی تجدید کرتے ہیں۔ وزیر اعظم نے کہا کہ آج ہم اپنے اس عزم کو بھی دہراتے ہیں کہ ہم اپنے کشمیری بھائیوں اور بہنوں کی اپنے حق کے لئے جدوجہد میں ان کا بھرپور ساتھ دیں گے۔ وزیر اعظم نے کہا کہ جموں و کشمیر کے پر امن شہری آج بھی ظلم و زیادتی کا شکار ہیں نہ صرف یہ کہ انہیں حق خودارادیت سے محروم رکھا جا رہا ہے بلکہ ان کے حقوق کی پامالی کی جا رہی ہے اور انہیں ظلم و زیادتی کا نشانہ بنایا جا رہا ہے۔ وزیر اعظم نے کہا کہ ہزاروں کشمیری اپنی جانوں کا نذرانہ پیش کر چکے ہیں اور ہزاروں بھارتی جیلوں میں پڑے سسک رہے ہیں لیکن تمام تر مظالم کے باوجود انہیں اپنے اس حق خودارادیت کے لئے جدوجہد سے روکا نہیں جا سکا جس کی پاسداری اقوام متحدہ کا منشور اور سلامتی کونسل کی قرار دادیں کرتی ہیں۔ یقیناً مسئلہ کشمیر کا کشمیری عوام کی خواہشات کے مطابق پر امن حل جنوبی ایشیاء میں پائیدار امن کے لئے ازحد ضروری ہے۔ وزیر اعظم نے کہاکہ پاکستان بھارت کے ساتھ تمام مسائل بشمول مسئلہ کشمیر مذاکرات کے ذریعے حل کرنے میں سنجیدہ ہے۔ ہم بھارت کو جامع اور نتیجہ خیز مذاکراتی عمل میں شرکت کی دعوت دیتے ہیں۔ ہم عالمی برادری پر بھی زور دیتے ہیں کہ وہ کشمیریوں کے حق خودارادیت کے حصول میں اپنا کردار ادا کرے۔