مقبول خبریں
دی سنٹر آف ویلبینگ ، ٹریننگ اینڈ کلچر کے زیر اہتمام دماغی امراض سے آگاہی بارے ورکشاپ
پارٹی رہنما شعیب صدیقی کو پاکستان تحریک انصاف پنجاب کا سیکریٹری جنرل بننے پر مبارک باد
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت جولائی میں برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز،سیمینارز منعقد کریگی
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
مظلوم کشمیری بھائیوں کیلئے پہلے کی طرح آواز بلند کرتے رہیں گے:مئیر کونسلر طاہر محمود ملک
اوورسیز پاکستانیز ویلفیئر کونسل کا وسیم اختر چوہدری اور ملک ندیم عباس کے اعزاز میں استقبالیہ
مسئلہ کشمیر کو برطانیہ و یورپ میں اجاگر کرنے پر تحریکی عہدیداروں کا اہم کردار ہے: امجد بشیر
جس لڑکی نے خواب دکھائے وہ لڑکی نابینا تھی!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
پاکستان خطہ میں امن کا خواہاں ہے ، پاکستان ایک مضبوط ، مستحکم اور خوشحال افغانستان دیکھنا چاہتا ہے ، ایاز صادق
اسلام آباد ۔ قومی اسمبلی کے سپیکر سردار ایاز صادق نے کہا ہے کہ پاکستان خطہ میں امن کا خواہاں ہے ، پاکستان ایک مضبوط ، مستحکم اور خوشحال افغانستان دیکھنا چاہتا ہے ، ایک مستحکم اور خوشحال افغانستان نہ صرف خطے بلکہ دنیا کے لیے امن و استحکام کے لیے ضروری ہے ۔وہ منگل کو پاکستان اور افغانستان کے لیے جرمنی کی طرف سے مقرر خصوصی نمائندے ڈاکٹر مائیکل کوچ سے پارلیمنٹ ہائوس میں ملاقات کے دوران بات چیت کررہے تھے ۔ ملاقات میں باہمی دلچسپی کے مختلف امور پر تبادلہ خیال کیا۔ ڈاکٹر مائیکل کوچ سے گفتگو کرتے ہوئے سپیکر نے کہا کہ پاکستان جرمنی کی طرف سے ملک میں اقتصادی اور سماجی ترقی کے لیے دی جانے والی امداد کو قدر کی نگاہ سے دیکھتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان جرمنی کے ساتھ پائیدار اور وسیع البنیاد شراکت داری کا خواہاں ہے۔ انہوں نے دونوں ممالک کے پارلیمانوں کے مابین تعاون کو بڑھانے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے کہاکہ دونوں ممالک کے اراکین پارلیمنٹ کے مابین رابطوں میں فروغ دونوں ممالک کے عوام کو قریب لانے اور موجودہ تعلقات کو مستحکم بنانے میں اہم کردار ادا کرسکتا ہے۔ انہوں نے یورپین یونین میں پاکستان کو جی ایس پی پلس کا سٹیٹس حاصل کرنے میں جرمنی کی حمایت کو سراہا۔خطے میں امن کا حوالہ دیتے ہوئے سپیکر نے کہا کہ پاکستان امن پر یقین رکھتا ہے اور ہمسایہ ممالک سے برابری کی سطح پر خوشگوار اور دوستانہ تعلقات چاہتا ہے۔ انہوںنے کہا کہ دہشتگردی نے خطے کو بری طرح متاثر کیا ہے ۔ انہوں نے خطے کے معاشی استحکام کے لیے تمام سٹیک ہولڈر ز کی مشترکہ کوششوں کی ضرورت پر زوردیا۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان ایک مضبوط ، مستحکم اور خوشحال افغانستان دیکھنا چاہتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ایک مستحکم اور خوشحال افغانستان نہ صرف خطے بلکہ دنیا کے لیے امن و استحکام کے لیے ضروری ہے۔