مقبول خبریں
دار المنور گمگول شریف سنٹر راچڈیل میں جشن عید میلاد النبیؐ کے حوالہ سےمحفل کا انعقاد
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
پاکستانی کشمیری جماعتوں کوتمام تر اختلافات پس پشت ڈالکر حق کیلئے اتحاد کی اشد ضرورت ہے
نوٹنگھم ... جموں کشمیر تحریک حق خودارادیت کے زیراہتمام جاری، حق خودارادیت برائے جموں کشمیر کی دستخطی مہم کی خصوصی تقریب نوٹنگھم میں ہوئی جس میں ممبر پارلیمنٹ گلینز ویلموٹ نے خصوصی شرکت کی، صدارت تحریک کے چیئرمین راجہ نجابت نے کی۔ جبکہ کرس لزلی ایم پی، مانچسٹر کے لارڈ میئر کونسلر نعیم الحسن، سابق لارڈ میئر کونسلر افضل خان، قونصل جنرل مانچسٹر ڈاکٹر ظہور احمد، لیبر پارٹی کی رہنما نجمہ حفیظ اعوان، نوٹنھگم کے سابق لارڈ میئر کونسلر گل نواز، مانچسٹر کے پاکستانی کمرشل کونسلر محمد عامر تھہیم، کونسلر حلیمہ خالد کونسلر لیاقت علی اور دیگر شخصیات بھی موجود تھیں۔ تقریب کی میزبانی کے فرائص راجہ محمد ایوب مشیر صدر آزاد کشمیر نے انجام دیے۔ اس موقع پر مہمان خصوصی گلینز ویلموٹ ایم ای پی نے کہا یورپین پارلیمنٹ میں موجود سوشلسٹ گروپ جو مسئلہ کشمیر کو بھرپور طور پر پیش کررہا ہے اور اس میں گروپ کو بڑی کامیابی حاصل ہوئی ہے۔ اب مئی میں یورپین پارلیمنٹ کے الیکشن کے بعد سوشلسٹ گروپ کشمیر ایشو پر ایک انٹر نیشنل کانفرنس منعقد کرے گا جس میں دنیا کی اہم اور بڑی قوتوں کے نمائندوں کے علاوہ متعلقہ فریقین کے علاوہ کشمیری قیادت اور عالمی مبصرین کو بھی مدعو کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ مجھے توقع ہے کہ کشمیر کی آزادی اور حق خودارادی کے لیے ہماری کاوشیں آگے بڑھیں گی اور کشمیری عوام کی 66 سالہ جدوجہد کامیاب ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ مسئلہ کشمیر ایک سیدھا سادہ اور حل طلب مسئلہ ہے جس پر اصولی طور پر پوری عالمی برادری متفق ہے۔ کیونکہ یہ ایک انسانی، سیاسی اور کشمیری عوام کے انسانی حقوق کا مسئلہ ہے۔ اس ایشو کو نہ تو پاکستان اور بھارت کے تعلقات کے حوالے سے دیکھنا چاہیے اور نہ ہی ایسے کوئی علاقائی، مذہبی یا غیر واضح مسئلہ بنانا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ اس کی سب سے بڑی مشکل یہ ہے کہ دونوں ملکوں کے کنٹرول حصوں میں کشمیری عوام کو بیک وقت اور مکمل آزادی کے ساتھ حق خود ارادیت کیسے مہیا کیا جائے، یورپین پارلیمنٹ میں ہم یہی کام کررہے ہیں۔ تحریک حق خودارادیت کے چیئرمین اور معروف کشمیری رہنما راجہ نجابت حسین نے کہا کہ مسئلہ کشمیر دنیا کے ہر جمہوریت پسند، باانصاف اور عوام دوست لوگوں کا مسئلہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ کشمیر پٹیشن پوری کامیابی اور مقبولیت کے ساتھ آگے بڑھ رہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگر برطانوی سیاسی جماعتیں اپنے زبردست اختلافات اور سیاسی جنگوں کے باوجود کشمیر ایشو پر ایک پلیٹ فارم پر آسکتی ہیں تو پھر پاکستانی کشمیری جماعتوں کو بھی چاہیے کہ وہ بھی اپنے تمام تر اختلافات پس پشت ڈال کر صرف اور صرف حق خودارادیت اور کشمیریوں کے آزادانہ حق رائے شماری کے لیے ایک اور صرف ایک پلیٹ فارم پر جمع ہوجائیں۔ انہوں نے خاص طور پر گلینزول موٹ کونسلر جنرل مانچسٹر ڈاکٹر ظہور اور خواتین رہنمائوں کا شکریہ ادا کیا۔ نوٹنگھم کے لیبر رکن پارلیمنٹ کرس لزلی نے کہا کہ لیبر پارٹی اس بات پر مکمل یقین رکھتی ہے کہ مسئلہ کشمیر ایک اصولی مسئلہ ہے اور اس کا تعلق انصاف، انسانی حقوق، عوام کے حق خودارادی اور لوگوں کے پیدائشی حق کے ساتھ ہے۔ یہی وجہ ہے کہ مسئلہ کشمیر حل لیبر پارٹی کے منشور اور پالیسی کا حصہ ہے۔ اس موقع پر اپنی اہلیہ کے ہمراہ ’’کمشیر پٹیشن‘‘ پر دستخط کیے۔ مانچسٹر کے سابق لارڈ میئر اور یورپین پارلیمنٹ کے لیے لیبر پارٹی کے امیدوار کونسلر افضل خان نے کہا کہ ہمیں خوشی ہے کہ برطانیہ اور یورپ میں کشمیر ایشو کو نئے سرے سے اجاگر کرنے اور اس میں ایک نئی توانائی اور حرارت پیدا کرنے میں لیبر پارٹی نے تاریخی کردار ادا کیا ہے۔ برمنگھم سوشل سروسز کی سابق چیئرپرسن اور لیبر رہنما نجمہ حفیظ اعوان نے اپنی تقریر میں کہا کہ لیبر پارٹی نے پاکستانی اور کشمیری کمیونٹی کے لیے برطانیہ کے اندر اور باہر ہر جگہ پر ان کی بہترین مدد اور ترجمانی کی ہے۔ تقریب کا آغاز معروف ادیب مقصود چوہدری نے تلاوت کلام مجید سے کیا۔ اس موقع پر اظہار خیال کرنے والوں میں نوٹنگھم کے سابق لارڈ میئر کونسلر گل نواز خان، کونسلر حلیمہ خالد، نامزد امیدوار برائے لیبر کونسلر، نگہت گل نواز، محترمہ شہناز صدیق، کونسلر مقصود حسین، جاوید عباس، رعنا نذیر، محمد الیاس گیلانی، جمیل احمد چوہدری اور دیگر رہنمائوں نے بھی خطاب کیا اور تحریک حق خودارادیت کی دستخطی مہم کی پرزور حمایت کرتے ہوئے پٹیشن پر دستخط کیے۔