مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
مقبوضہ کشمیر میں 16بے قصور مسلمانوں کےقتل پرمفتی فضل احمد قادری کی مذمت
سلاو..مرکزی جماعت اہلسنت یو کے ویورپ کے کشمیر ونگ نے مقبوضہ کشمیر میں 16بے قصور مسلمانوں کے قتل کی شدید مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ دنیا کی سب سے بڑی جمہوریت کی دعویدار بھارتی حکومت نے مقبوضہ کشمیر میں اپنی درندہ صفت فوج کو کشمیری عوام کے قتل عام کی کھلی چھٹی دے رکھی ہے۔ دہلی اور ممبئی میں کتا مار دیاجائے تو پوری حکومت سراپا احتجاج بن جاتی ہے اور عوام آسمان سر پر اٹھالیتے ہیں لیکن مقبوضہ کشمیر میں نہتے مسلمانوں کے قتل عام پر بھارتی حکومت اور عوام کے کانوں پر جوں تک نہیں رینگتی۔ کشمیر ونگ کے سربراہ علامہ مفتی فضل احمد قادری نے کہا کہ بھارتی افواج کی درندگی سے ایک لاکھ کے قریب نہتے مسلمانوں کو قتل کیاجاچکا ہے اور ہزاروں عصمت مآب خواتین کو بیوگی کی چادر اوڑھنی پڑی۔ کئی لاکھ بچے یتیم ہوگئے اور سیکڑوں گھروں کو ملیا میٹ کردیا گیا مگر بھارتی پارلیمنٹ یا عدالت عظمیٰ تو کیا اقوام متحدہ اور سلامتی کونسل جیسے بااختیار اور انسانی حقوق کے علمبردار ادارے مہر بلب ہیں اور بھارت کے خلاف کوئی اقدام کرنے سے گریزاں ہیں۔بلکہ حکومت پاکستان بھی پہلے کی طرح کشمیری مظلوموں کا برملا ساتھ دینے سے آنکھیں چراتی ہے۔