مقبول خبریں
برطانوی حکومت مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے اپنا اثر و رسوخ استعمال کرے:ایم پی جیوڈتھ کمنز
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کا سابق پراسیکیوٹر ایڈوکیٹ جنرل ریاض نوید و دیگر کے اعزاز میں عشائیہ
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
وزیر اعظم پاکستان اوورسیز کی مشکلات کا حل ٹھوس اور مستقل بنیادوں پر چاہتے ہیں: زبیر گل
لندن ... وزیر اعظم پاکستان میاں محمد نواز شریف چونکہ خود جلاوطنی کی زندگی گزار چکے ہیں اسلئے انہیں پردیس میں رہ کر دیس میں درپیش مشکلات کا اندازہ ہے، وہ محض کاغذی کاروایوں پر یقین نہیں رکھتے اسلئے ٹھوس منصوبہ بندی کر رہے ہیں جسکے نتیجے میں اوورسیز پاکستانیوں کو وہ سہولتیں دستیاب ہونگی جنکا آج تک انہوں نے تصور بھی نہ کیا ہو گا۔ ان خیالات کا اظہار پاکستان مسلم لیگ ن برطانیہ کے صدر وزیر اعلی پنجاب کی ایڈوازری کمیٹی برائے اوورسیز کا سابق چیئرمین زبیر گل نے مسلم لیگ ن کے مرکزی رہنما حمزہ شہباز شریف سے ملاقات کے بعد کشمیر لنک لندن سے ٹیلی فون پر بات چیت کرتے ہوئے کیا۔ زبیر گل نے کہا مسلم لیگ ن کا مقصد عوام کی خدمت ہے چاہے وہ کسی بھی طریقے سے ہو اور عوام کو قائد مسلم لیگ میاں محمد نواز شریف کے وژن کو مد نظر رکھتے ہوئے اس امر کا یقین ہونا چاہیئے کہ انکے اوورسیز کیلئے اقدام ٹھوس بنیادوں پر ہوں گے۔ زبیر گل نے کہا ہے کہ مسلم لیگ ن برطانیہ منظم و متحد ہو کر اپنے قائد میاں محمد نواز شریف کے پاکستان کی ترقی خوشحالی اور تارکین وطن کے مسائل کو حل کرنے کی جو شاندار پالیسیاں اپنائے ہوئے ہیں کی بھرپور حمایت و معاونت کرتی ہے اور دوہری شہریت کے معاملے کو حل کرنے کے لئے کوشاں ہے۔ انہوں نے کہا ضروری ہے کہ اوورسیز پاکستانیوں کے لئے جلد انصاف کے لئے خصوصی سپیڈی انصاف کی عدالت کا قیام اور اوورسیز پاکستانیوں کے لئے مشاورتی یا ٹاسک فورس کا قیام جسے آئینی حیثیت حاصل ہوتا کہ جو بھی حکومت ہو یہ ادارہ تارکین وطن کی ترقی خوشحالی کے لئے کام کرتا رہے۔