مقبول خبریں
اولڈہم کے نوجوانوں کی طرف سے روح پرور محفل، پیر ابو احمد مقصود مدنی کی خصوصی شرکت
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
میری رگوں میں گردش کرنے والا لہواپنائیت کا احساس لیکر پارلیمنٹ میں لے جاتا ہے:ڈاکٹر سجاد کریم
نیلسن ... میں جب یورپی پارلیمنٹ کی عمارت میں داخل ہوتا ہوں تو میرے دماغ کے نہاں خانہ میں اپنے تمام چاہنے والوں کی محبتیں اور بہی خواہوں کی توقعات کا ہجوم ہوتا ہے محبتیں مجھے حوصلہ اور توقعات کام کرنے کی لگن بخشتی ہیں ۔ یہی میری گلیاں جہاں میں کھیل کر جوان ہؤا اور یہیں سے میں نے اپنی سیاست کا آغاز کیا اور جب یہاں میں لوٹ کر آتا ہوں تو میری رگ پے میں گردش کرنے والا لہواپنائیت کے احساس کو لے کر پارلیمنٹ میں لے جاتا ہے میں اپنے پس منظر کو کیسے بھلا سکتا ہوں اور میرے ہمراہ بڑا خوش کن احساس ہر وقت رہتا ہے کہ میری پُشت پر میرے بزرگوں ، دوستوں اور عزیزوں کی دعائیں موجود ہیں نارتھ ویسٹ سے کنزر ویٹو پارٹی کے ممبر یورپی پارلیمنٹ ڈاکٹر سجاد کریم نے برنلے پینڈل فرینڈز لیگ کی طرف سے اپنے اعزاز میں برائیر فیلڈ پیپلز سنٹر میں منعقد ہونے والی ایک تقریب سے بطور مہمان خصوصی خطاب کر تے ہوئے کہایو ایم ٹی لاہور کی طرف سے پی ایچ ڈی کی اعزازی ڈگری ملنے کی خوشی میں اور ان کی جملہ کارکردگی کو سراہنے کی خاطر دوستوں نے ایک نمائندہ تقریب کا انعقاد کیا کونسلر سے ایم ای پی تک اور پھر آج پاکستان کی جانب سے خدمات کے صلے میں دی گئی ڈگری تک تفصیل اور جذباتی انداز میں گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ہمارا بر طانیہ کا سسٹم قابل تعریف ہے کہ محنت کرنے والے کو آگے بڑھنے سے نہیں روکتا۔بر طانیہ اور پاکستان کے تعلقات کے بارے ان کا کہنا تھا کہ میں ذاتی طور پر ان تعلقات کو دو برادر ملکوں کے تعلقات سمجھتا ہوں ہماری بہت سی قدریں ایک دوسرے کے قریب تر ہیں اپنے اعزاز میں پیش کئے گئے سپاس نامے میں جی ایس پی پلس کے حوالے سے مندرجات پر روشنی ڈالتے ہوئے انہوں نے پینڈل کے ممبر پارلیمنٹ انیڈریو سٹیفنسن جو کہ پارلیمنٹ میں آل پارٹی پارلیمنٹیرین فرینڈز آف پاکستا ن گروپ کے چئیر مین بھی ہیں کی کاوشوں کو بھی سراہاا اور جی ایس پی پلس کی کامیابی میں ان کے رول اور بر طانوی حکومت کی حمائت کو بھی خراج تحسین پیش کیا اور ایک دوسرے کے ساتھ باہمی تعاون سے کمیونٹی کی خدمت کرنے کا عزم ظاہر کیا اور انہوں نے انیڈریو سٹیفنسن کے متعلق کہا کہ انیڈریو کو دوبارہ منتخب ہو نا چاہیئے اس لئے نہیں کہ یہ ہمارے دوست ہیں بلکہ اس لئے کہ یہ پینڈل کے لئے ایک مثالی ممبر پارلیمنٹ ہیں اور انہوں جی ایس پی پلس پر گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اب پاکستان کے سیاست دانوں پر منحصر ہے کہ وہ اپنے عمل اور کردار سے جی ایس پی پلس سے کس حد تک استفادہ حاصل کر سکیں گے ہم نے اپنا حق ادا کیایورپی یونین میں قانون سازی کے ضمن میں انہیں ملنے والی ذمہ داریوں کے متعلق گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ آپ سب کی دعاؤں کی بدولت اللہ تعالیٰ نے مجھے اس قابل بنایا کہ سو سال ، دو سو سال یا تین سو سال بعد بھی جب مورخ قانون سازی کے عمل کا ذکر کرے گا تو برٹش ایتھنک مائنارٹی کے کردار کو حذف نہیں کر سکے گا۔پاکستان میں اقلیتوں خصوصاً عیسائیوں کے ساتھ ناروا سلوک کے متعلق انہوں نے کہا کہ میں جب بھی پاکستان کے صدر، وزیر اعظم یا ارباب بست و کشاد سے ملتا ہوں ان کی توجہ اس جانب ضرور مبذول کراتا ہوں اور باور کراتا ہوں کہ یورپی یونین اور پاکستان کے تعلقات میں پاکستان میں اقلیتوں کے ساتھ رویہ کی بڑی اہمیت ہے اینڈریو سٹیفنسن نے ڈاکٹر سجاد کریم کو اپنا استاد اور مینٹور قرارد یتے ہوئے کہا کہ میں نے ان سے بہت کچھ سیکھا ہے اور ہم پاکستانی کمیونٹی اور پاکستان کے لئے مل جل کر کام کرتے ہیں ۔ میاں عبد الحمید نے سپاس نامہ پڑھا جس میں پچھلے دس سال میں ڈاکٹر سجاد کریم کی انتہائی مختصر طور پر کارکردگی کو اجاگر کیا گیا جس میں انہوں نے یورپی پارلیمنٹ میں رینڈیشن کا سوال اٹھایا ، ایما نکلسن کی کشمیر رپورٹ میں جاندار کردار ادا کیا ،مقبوضہ کشمیر میں گمنام قبروں کی دریافت پر صدائے احتجاج بلند کیا ار ورحال ہی میں پاکستان کو جی ایس پی پلس کے حصول یافتہ ممالک میں شامل کرانے پر ان کی آٹھ سالہ کاوشوں کو سراہا گیا ، حاجی صغیر احمد کی زیر صدارت ہونے والی اس تقریب کے مقررین میں خطیب مدینہ مسجد نیلسن سید نوید شاہ ،چوہدری محمد اسلم بنڈالوی، محمد عبد اللہ زید ، اسلم جاوید شامل تھے تقریب میں شریک معززین میں برنلے کے سابق کونسلر مذکر علی ، پینڈل سے کونسلر ندیم احمد ، کونسلر عبد العزیز ، کونسلر اسجد محمود ، جبکہ ممتاز احمد نے ہدیہ نعت اور فیضان فیصل تلاوت کی سعادت حاصل کی۔