مقبول خبریں
راچڈیل مساجد کونسل کی طرف سے مئیر کونسلر محمد زمان کی مئیر چیرٹیز کیلئے فنڈ ریزنگ ڈنر کا اہتمام
اوورسیز پاکستانیوں کے لئے خصوصی سیل بنایا جانا چاہئے: سلیم مانڈوی والا
مسئلہ کشمیر کو پر امن طریقے سے حل کیا جائے: برطانوی و یورپی ارکان پارلیمنٹ کا مطالبہ
برطانیہ میں آباد تارکین وطن کی مسئلہ کشمیر پر کاوشیں قابل تحسین ہیں:چوہدری محمد سرور
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
کشمیریوں کو ان کا حق دیئے بغیر خطے میں پائیدار امن کا حصول ممکن نہیں: راجہ نجابت حسین
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
برطانیہ میں مقیم کشمیری و پاکستانی 16مارچ کو بھارت کے خلاف مظاہرہ کریں گے: راجہ نجابت حسین
وہ بے خبر تھا سمندر کی بے نیازی سے!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
غیر قانونی تارکین ... اتحادی حکومت میں اختلافات
لندن... غیر قانونی تارکین کے لئے چلائی جانے والی اشتہاری مہم جس میں تارکین کومتنبہ کیاگیا ہے کہ گھر جاؤ یاگرفتاری کیلئے تیار ہوجاؤکے حوالے سے اتحادی حکومت میں اختلافات سامنے آگئے ہیں،ٹائمز نے یہ خبر دیتے ہوئے لکھا ہے کہ سینئر لبرل ڈیمو کریٹس نے شکایت کی ہے کہ اس متنازع مہم کے بارے میں ہم سے مشورہ نہیں کیاگیا، اس مہم کے حوالے پیر سے 2 وینز جن پر یہ پیغامات درج ہیں لندن میں تارکین کی اکثریت والے بروز میں چکر لگارہی ہیں، اس مہم پر 10 ہزار پونڈ خرچ کاتخمینہ ہے، یہ مہم اگلے 15 دن تک جاری رہنے کاامکان ہے۔ UKIP کے رہنما نائجل فرج نے اس اشتہارکو غیر قانونی تارکین کو ریوڑ کی طرح ہانکنے کے مترادف قرار دیتے ہوئے الزام لگایا ہے کہ حکومت یکم جنوری سے برطانیہ میں ملازمت کا حق مل جانے کے بعد بلغاریہ اور رومانیہ سے ملک میں داخل ہونے والے 28 ملین غریب افراد کی طرف سے لوگوں کی توجہ مبذول کرانے کی کوشش کررہی ہے۔