مقبول خبریں
ڈیبی ابراھم کیساتھ ناروا سلوک سے بھارت کا نام نہاد جمہوری چہرہ بے نقاب
مہنگائی کی ذمے دار عمران خان حکومت ہے ،شہباز شریف
دعوت اسلامی برمنگھم کے زیر اہتمام خراب موسم کے باوجودجشن عید میلاد النبیؐ کا جلوس
برطانوی شاہی جوڑے کی پاکستان میں زبردست پذیرائی، وزیر اعظم اور صدر مملکت سے ملاقاتیں
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
اسرار احمد راجہ کی کتاب کی تقریب رونمائی ،مئیر آف لوٹن کونسلر طاہر ملک ودیگرافراد کی شرکت
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
راجہ نجابت حسین کی ڈیبی ابراھام کے ہندوستان میں داخلے پر پابندی کی شدید مذمت
آتش فشاں
پکچرگیلری
Advertisement
چیئرمین کشمیر کمیٹی سید فخر امام سے راجہ نجابت اورحریت رہنماء عبدالحمیدلون کی ملاقات
مانچسٹر ( محمد فیاض بشیر ) چیئرمین کشمیر کمیٹی و سینئر پارلیمنٹیرین سید فخر امام سے جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کے چیئرمین راجہ نجابت حسین اور حریت رہنماء عبد الحمید لون کی ملاقات ، گذشتہ روز قومی اسمبلی میں چیئرمین کمشیر کمیٹی کے چیمبر میں ہونے والی ملاقات میںکشمیر کی تازہ صورتحال ، مسئلہ کشمیر کے حوالے سے قومی اور بین الاقوامی سطح پر ہونے والے اقدامات اور کوششوں کے حوالے سے تفصیلی تبادلہ خیال کیا گیا ۔ چیئرمین کشمیر کمیٹی سید فخر امام نے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ بھارت میں اس وقت انتہاء پسند نظریات کا غلبہ ہے ۔ مودی اور اس کی انتظامیہ انتہاء پسندانہ اقدامات کے ذریعے جہاں کشمیر میں بربریت کر رہے ہیں وہیں اب بھارت میں بھی اقلیتیں انتہاء پسندی سے محفوظ نہیں رہیں ۔ دنیا کو کشمیر کی صورتحال کا نوٹس لیتے ہوئے بھارت کو اس کے انتہاء پسندانہ اقدامات سے روکنا ہو گا ۔ بھارت کے اقدامات نہ صرف کشمیر بلکہ پورے خطہ کے امن و سلامتی کے لئے نقصان دہ ہیں ۔ 5اگست کے بعد بین الاقوامی سطح پر جس طرح کشمیری و پاکستانی کمیونٹی نے بھارت کے چہرے کو بہترین انداز میں بے نقاب کیا اور مؤثر احتجاج کر کے دنیا کی توجہ کشمیر کی جانب مبذول کرائی ۔ پاکستان ہر سطح پر کشمیریوں کے ساتھ ہے اور تحریک آزادی کو سپورٹ کرتا ہے ۔ کشمیریوں کا مطالبہ حق خود ارادیت بین الاقوامی برادری کی جانب سے تسلیم شدہ اور تمام تر بین الاقوامی قوانین و چارٹرڈ کے مطابق ہے ۔ سید فخر امام نے سفارتی سطح پر متحرک راجہ نجابت حسین کی کوششوں کو سراہا ۔ اس موقع پر ملاقات میں چیئرمین تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل راجہ نجابت حسین نے چیئرمین کشمیرکمیٹی کو برطانیہ ، یورپ اور دیگر ممالک میں ہونے والی اوورسیز کشمیری و پاکستانی کمیونٹی کی کوششوں اور مسئلہ کشمیر کے لئے ہونے والی مسلسل سرگرمیوں سے آگاہ کیا ۔ راجہ نجابت حسین نے کہا کہ کشمیر کی موجودہ صورتحال تقاجا کرتی ہے کہ پاکستان مزید مؤثر اور فعال سفارتکاری کے ذریعے بین الاقوامی سطح پر کشمیری کی تحریک کے حق میں رائے عامہ بنائے ۔ دنیا بھر میں سفارتی مشنز کو متحرک کرتے ہوئے انہیں مسئلہ کشمیر پر فوکس کرنے اور بھارتی لابی کے جواب میں مؤثر حکمت عملی مرتب کرنے کے اہداف دیئے جائیں ۔ تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل برطانیہ ، یورپ میں پارلیمنٹ کے اندر اور باہر لابی مہم اور تقریبات منعقد کر رہی ہے تا کہ برطانیہ و یورپ کے ممبران پارلیمنٹ ، مقامی سیاستدانوں ، مندوبین کی توجہ کشمیر میں بھارتی مظالم کی طرف مبذول کرائی جا سکے ۔ اس موقع پر حریت رہنماء عبد الحمید لون نے مقبوضہ کشمیر میں ہونے والے مظالم اور تازہ ترین صورتحال سے آگاہ کرتے ہوئے بتایا کہ بھارت مسلسل انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں کر رہا ہے ، ہزاروں کشمیری گرفتار کر کے انڈین جیلوں میں قید کر دئے گئے ہیں ۔