مقبول خبریں
مسرت چوہدری اور اختر چوہدری کا لارڈ مئیر عابد چوہان کے اعزاز میں ظہرانہ
پاکستان پریس کلب یوکے کے سالانہ انتخابات اور تقریب حلف برداری
چیئرمین پی آئی ایچ آرچوہدری عبدالعزیز کوسوک ایوارڈ فار کمیونٹی سروسز سے نواز گیا
برطانوی شاہی جوڑے کی پاکستان میں زبردست پذیرائی، وزیر اعظم اور صدر مملکت سے ملاقاتیں
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
اسرار احمد راجہ کی کتاب کی تقریب رونمائی ،مئیر آف لوٹن کونسلر طاہر ملک ودیگرافراد کی شرکت
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
ہر انسان کو اس کے مذہب کے مطابق تدفین کی اجازت ملنی چاہئے: سعیدہ وارثی و دیگر
Corona virus
پکچرگیلری
Advertisement
پاکستان کی سرزمین قدیم تہذیبوں کا مسکن اور محققین کیلئے پرکشش جگہ ہے: ہائی کمشنر
لندن(عدیل خان سے) برطانوی دارالحکومت کی نامور نمائش گاہ ایکسل لندن میں منعقد ہونے والے ورلڈ ٹریول مارکیٹ میں پاکستانی ہائی کمشنر محمد نفیس زکریا نے گورنر گلگت بلتستان راجہ جلال حسین مقپون، خیبرپختونخواہ کے سینئر وزیر عاطف خان، آزاد کشمیر کے وزیر سیاحت و اطلاعات مشتاق منہاس، گلگت بلتستان کے وزیر سیاحت فدا خان اور ورکس کے وزیر ڈاکٹر محمد اقبال کے ہمراہ پاکستان ٹورازم پویلین کا افتتاح کیا۔ ہرسال ہزاروں کی تعداد میں سیاح اور ٹورآپریٹرز ورلڈ ٹریول مارکیٹ میں آتے ہیں۔ افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ہائی کمشنر نے کہا کہ پاکستان میں زندگی کے تمام شعبوں سے تعلق رکھنے والے افراد کے لئے سیاحت کے پرکشش مقامات اور کرہ ارض کی انتہائی خوبصورت اور پرسکون جگہیں موجود ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ پاکستان میں سیاحت میں شاندار اضافہ دیکھنے میں آ رہا ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ مذہبی سیاحت ہو یا ماحولیاتی سیاحت، مہم جوئی ہو یا کھیلوں کی سیاحت، کوہ پیمائی ہو یا ٹریکنگ، پاکستان میں ہر طرح کے سیاحوں کے لئے بے پناہ مواقع موجود ہیں۔ نفیس زکریا نے کہا کہ پاکستان کی سرزمین قدیم تہذیبوں کا مسکن ہے اور صدیوں سے یہ مورخین، محققین اور سیاحتی ادیبوں کے لئے بھرپور کشش رکھتی ہے۔ ہائی کمشنر نے پویلین کے منتظمین کی کوششوں کو سراہا اور کہا کہ اس سے سیاحت کی مارکیٹنگ میں مدد ملے گی اور سماجی سرگرمیوں، کاروباری اداروں کے درمیان باہمی ملاقاتوں اور پارٹنرشپس کی بدولت زیادہ سے زیادہ لوگوں تک رسائی میں مدد ملے گی۔ انہوں نے کہا کہ ورلڈ ٹریول مارکیٹ جیسے عالمی سیاحتی میلوں میں پاکستان کو اجاگر کرنے سے ملک میں زیادہ سے زیادہ سیاح آئیں گے۔ اس موقع پر مہمان گورنر اور وزراء نے پاکستان پویلین پر آنے والے میڈیا کے نمائندوں اور غیرملکی سیاحوں کے ساتھ ملاقاتیں کیں اور انہیں پاکستان میں موجود سیاحتی مواقع کے بارے میں آگاہ کیا۔ انہوں نے امید ظاہر کی کہ ورلڈ ٹریول مارکیٹ میں شرکت سے پاکستان کے سیاحتی افسران اور ٹور آپریٹرز کو عالمی سیاحتی صنعت کو سمجھنے اور ملک میں سیاحت کے شعبے میں موجود بیش بہا مواقع سے فائدہ اٹھانے میں مدد ملے گی۔ گلگت بلتستان، بلوچستان، سندھ، خیبرپختونخواہ، پنجاب، آزاد جموں وکشمیر اور پاکستان ٹورازم ڈویلپمنٹ کارپوریشن (پی ٹی ڈی سی) کے رنگوں سے سجے پاکستان پویلین پر سفر و سیاحت کے شوقین افراد کے علاوہ بین الاقوامی ٹریول کمپنیوں اور میڈیا کے نمائندے اور بلاگرز آئے۔ اس پویلین کو روایتی لباسوں اور دست کاری کے علاوہ بروشر، پمفلٹ، پوسٹر اور ٹی وی سکرینوں سمیت مختلف ثقافتی مصنوعات سے سجایا گیا تھا جن کے ذریعے پاکستان کی رنگارنگ ثقافت اور ورثے کو اجاگر کیا گیا۔ پاکستان پویلین میں ان لوگوں کی دلچسپی زیادہ رہی جو اس سے پہلے سیاحت کے لئے پاکستان آ چکے ہیں اور دوبارہ آنے کے خواہشمند ہیں۔ ورلڈ ٹریول مارکیٹ لندن کا شمار دنیا میں سیاحت کے بڑے میلوں میں ہوتا ہے اور یہ سیاحتی خدمات فراہم کرنے والوں اور سیاحتی مقامات کے درمیان روابط بڑھانے میں انتہائی اہم کردار ادا کرتا ہے۔