مقبول خبریں
مدر فائونڈیشن گوجرخان کے روح رواں راجہ عرفان کی برطانیہ آمد پر انکے اعزاز میں استقبالیہ
ماحولیاتی آلودگی کے باعث بچہ ماں کے رحم میں مر جاتا ہے یا اسکی افزائش رک جاتی ہے: ایک تحقیق
پاک سر زمین پارٹی کے مرکزی جوائنٹ سیکرٹری محمد رضا کی زیر صدارت عہدیداران و کارکنان کا اجلاس
برطانوی شاہی جوڑے کی پاکستان میں زبردست پذیرائی، وزیر اعظم اور صدر مملکت سے ملاقاتیں
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
حلقہ ِ ارباب ِ ذوق کے ادبی پروگرام میں پاکستانیوں اور کشمیری کونسلرز کی بڑی تعداد میں شرکت
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
پروفیٹک گفٹس ویڈنگ اینڈ ایونٹس آرگنائزر کے زیر اہتمام ایشین ویڈنگ اینڈ پلانرز ایونٹ کا انعقاد
میرے تمام خواب نظاروں سے جل گئے
پکچرگیلری
Advertisement
تحریک حق خود ارادیت انٹرنیشنل کی مؤثر لابی ، لیبر پارٹی کی کانفرنس میں مسئلہ کشمیر کی باز گشت
لندن (محمد فیاض بشیر) جموں و کشمیر تحریک حق خود ارادیت انٹر نیشنل کی مؤثر لابی سے برطانیہ کی اپوزیشن جماعت لیبر پارٹی کی سالانہ کانفرنس میں مسئلہ کشمیر کی باز گشت، شیڈو وزیر خارجہ ایم پی ایملی تھارنبری نے اپنی تقریر میں بھارتی آئین کی دفعہ 370کو ختم کرنے کا مسئلہ اٹھایا۔ نیشنل ایگزیکٹو کمیٹی نے فوری تحریک پر بحث کو بھی منظور کر لیا۔ کانفرنس کے چوتھے دن بحث کے لئے پیش کی جائے گی اس موقع پر تحریک حق خود ارادیت کے چیئرمین راجہ نجابت حسین، سیکرٹری جنرل محمد اعظم، برطانیہ کی چیئرپرسن کونسلر یاسمین ڈار، کونسلر صبیحہ خان، کونسلر نویدہ خان، کونسلر ناظم اعظم، کونسلر ذوالفقار علی، کونسلر لیاقت علی، چوہدری شوکت علی، نوجوان رہنماء ذیشان عارف اور برطانیہ کے مختلف شہروں سے آئے کشمیری و پاکستانی مندوبین بھی موجود ہوں گے۔ تحریک کے سیکرٹری جنرل اور لیبر پارٹی کے لیڈر ایم پی جیریمی کوربن کے دست راست محمد اعظم نے گذشتہ تین دنوں مسلسل تگ و دو جاری رکھی آخر کار اس قرار داد کو پیش کروانے میں کامیاب ہو گئے۔اس قرارداد کے لئے راجہ نجابت حسین اور ان کی پوری ٹیم خصوصاًً یورپی ممبران پارلیمنٹ، شیڈو کابینہ کے اہم کشمیر دوست ارکان برطانوی پارلیمنٹ اور کشمیری و پاکستانی خواتین مندوبین کے علاوہ مختلف ممالک سے تعلق رکھنے والے لیبر مندوبین نے بھی اس مہم میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیا اور تحریک حق خود ارادیت کے عہدیداروں کی معاونت کی۔ کانفرنس کے تیسرے دن جہاں تحریک حق خود اردایت برطانیہ کی چئیرپرسن کونسلر یاسمین ڈار نے بحیثیت ممبر نیشنل ایگزیکٹو کمیٹی بریکسٹ ایشو پر لیبر پارٹی لیڈر کے مؤقف کی حمایت کی وہیں تحریک حق خود ارادیت کی دیگر خواتین رہنماؤں سے مل کر خواتین ممبران پارلیمنٹ اور شیڈو وزراء سے ملاقاتیں کر انہیں کشمیر میں جاری 5oروز سے کرفیو، لاک ڈاؤن اور وہاں انسانی حقوق کی مسلسل خلاف ورزیوں بارے آگاہ کیا اور انہیں لیبر پارٹی کی پالیسی میں شامل کرنے اور بحث کے لئے حمایت کی اپیل کی۔کونسلر یاسمین ڈار نے خواتین رہنماؤں کے ہمراہ شیڈو وزیر ایم پی انجیلا رینر، ایم پی ڈیان ایبٹ، ایم پی ڈان بٹلر، نیشنل ایگزیکٹو کمیٹی کی ممبران، سکاٹش پارلیمنٹ میں لیبر گروپ لیڈر ایم ایس پی رچرڈ لینارڈ کے علاوہ مختلف مندوبین سے ملاقاتیں کیں۔ اس موقع پر محمد اعظم سیکرٹری تحریک حق خود ارادیت نے لیبر پارٹی کی لیڈر شپ اور تمام ہمدرد مندوبین کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیاں بند کرانے اور مسئلہ کشمیر کے حل کے لئے سفارتی محاذ پر تحریک کے چیئرمین راجہ نجابت حسین کی قیادت میں جدو جہد جاری رکھیں گے اور ہر ایوان کا دروازاہ کا دروازہ کھٹکھٹائیں گے۔انہوں نے لیبر ممبران سے اپیل کی کہ وہ اس قرار داد کو منظور کرانے میں ہماری مد د کریں۔