مقبول خبریں
بین الاقوامی میڈیا نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت کی کلی کھول دی ہے:سردار مسعود خان
ڈیبی ابراھم کی قیادت میں ممبران پارلیمنٹ اور کمیونٹی رہنماؤں کی لارڈ طارق احمد سے ملاقات
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز اورسیمینارز منعقد کریگی : راجہ نجابت
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کی وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر اور شاہ غلام قادر سے ملاقات
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
9ستمبر کو اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کے باہر بھرپور مظاہرہ کرینگے:راجہ نجابت حسین
سوچنے کے موسم میں سوچنا ضروری ہے!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم ، 31اگست کوتاریخ ساز احتجاج ہو گا:چوہدری بشیر رٹوی
مانچسٹر(محمد فیاض بشیر)مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم کیخلاف مانچسٹر میں 31اگست کوتاریخ ساز احتجاج ہو گا۔احتجاج کو کامیاب بنانے کے لیے حتمی لائحہ عمل طے کر لیا گیا۔کشمیر کمیونٹی،سکھ کمیونٹی،پاکستان کمیونٹی کے علاوہ دیگر ممالک کے کشمیریوں سے ہمدردی رکھنے والے افراد شرکت کریں گے۔احتجاج کا مقصد عالمی سطح پر بھارتی مظالم کو بے نقاب کرنا ہے اور برطانیہ سمیت دیگر عالمی طاقتوں کی توجہ مسئلہ کشمیر پر مبذول کروانی ہے۔مسلم کانفرنس تحریک کشمیر برطانیہ و یورپ کے چیئرمین نے مانچسٹر کے احتجاج کے حوالے سے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ برطانیہ بھر میں کشمیر کمیونٹی بھارتی ظلم و ستم کو بے نقاب کرنے کے لیے متحرک ہے اور تمام کشمیر پارٹیوں سے بالاتر ہو کر قومی کاز کو آگئے بڑھانے میں اہم رول ادا کر رہے ہیں۔برطانیہ کے مختلف شہروں میں کشمیری عوام سے یکجہتی اور بھارتی افواج کے مقبوضہ کشمیر میں ظلم و ستم پر بھرپور احتجاج ہو رہے ہیں۔مانچسٹر میں بھی کشمیر کمیونٹی کے زیر اہتمام 31اگست کو تاریخ ساز احتجاج ریکارڈ کروایا جائے گا اور مسئلہ کشمیر کے حل کو تقویت دینے کے لیے مانچسٹر کا احتجاج بھی ایک زینہ ہو گا۔چوہدری بشیر رٹوی نے کہا کہ بھارت کو سمجھ جانا چاہئے کہ کشمیر کے وارث زندہ ہیں اور ظلم و جبر کے حربوں سے تحریک آزادی کو دبایا نہیں جا سکتا۔کشمیریوں نے حصول آزادی کے لیے لاکھوں قربانیاں دیں ہیں اور بھارت سے آزادی لینے کے لیے ہمیشہ سر گرم رہے ہیں۔بھارت جتنی مرضی طاقت لگا لے لیکن یہ امر یقینی ہے کہ کشمیریوں کے جذبوں کے سلگتے آزادی کے آلاؤ کو کبھی بھی شکست نے دے پائے گا۔ہم آزادی لیکر رہیں گے اور اس ضمن میں عالمی طاقتوں کی حمایت اور اقوام متحدہ کے چارٹر کیمطابق مسئلہ کشمیر کا حل جنوبی ایشیا کے امن کی لیے دیرپا اور پائیدار ثابت ہو گا۔اُنھوں نے کہا کہ برطانوی تارکین وطن مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے جس تیزی سے صدا بلند کر رہے ہیں اور اقوام عالم کو کشمیر میں ظلم و ستم سے متعلقہ باور کروا رہے ہیں وہ کردار تاریخ میں ہمیشہ امر رہے گا۔اُنھوں نے مزید کہا کہ کشمیر کی آزادی کے لیے ہم جدوجہد جاری رکھیں گے۔انشااللہ عنقریب کشمیر ی عوام آزادی کی فضاؤں میں سانس لے گی۔