مقبول خبریں
اداراہ نور السلام فیصل آباد کی زیر سرپرستی محفل ذکر و نعت بسلسلہ فروغ علم کا انعقاد
کرالے میں اوورسیزپاکستانیوں کی میٹنگ،مختلف طبقہ ہائے فکر کے افراد کی شرکت
دعوت اسلامی برمنگھم کے زیر اہتمام خراب موسم کے باوجودجشن عید میلاد النبیؐ کا جلوس
برطانوی شاہی جوڑے کی پاکستان میں زبردست پذیرائی، وزیر اعظم اور صدر مملکت سے ملاقاتیں
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سردار عتیق کی قیادت میں جدوجہد آزادی پایہ تکمیل تک پہنچائیں گے:رہنما ایم سی
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
مقبوضہ کشمیرمظالم:عالمی طاقتوں، اقوام متحدہ کو کردار ادا کرنا ہو گا : ڈاکٹر سجاد کریم
بلقیس بانو زندہ کیوں؟؟؟؟؟
پکچرگیلری
Advertisement
عالمی طاقتوں کے دوہرے معیار سے مسئلہ کشمیر حل نہ ہو سکا:مولانا خادم حسین چشتی
اولڈہم (محمد فیاض بشیر)برطانیہ بھر میں عیدالاضحی کا تہوار مذہبی جوش وجذبے اور سادگی سے منایا گیا جسکی بنیادی وجہ مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت اور حال ہی میں کشمیر کی خصوصی حیثیت ختم کر کے اسے بھارتی یونین کا حصہ بنانے کا گھناؤنا فعل ہے ۔ نگینہ جامع مسجد ورنتھ ہال روڈ اولڈہم میں عید الاضحی کے خصوصی خطبہ کے موقع پر ممتاز مذہبی راہنما مولانا قاری خادم حسین چشتی نے کہا کہ ستر سال گزر گئے مقبوضہ کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں نہتے شہریوں کو تشدد کا بدترین نشانہ بنانے اور خواتین کی عزتوں سے کھیلنا بھارتی سکیورٹی اداروں کے اہلکاروں کا معمول بن گیا عالمی طاقتیں، اقوام متحدہ اور انسانی حقوق کی علمبردار تنظیموں کی سرد مہری نے کشمیری قوم کو بھرپور احتجاج اور تشدد کا راستہ اپنانے پر مجبور کر دیا ۔ پاکستان کشمیری قوم کا واحد وکیل ہے اور مسئلہ کشمیر پر بھارت سے دو جنگیں بھی ہو چکی ہیں اقوام متحدہ میں کشمیریوں کو انکا پیدائشی حق خود ارادیت بارے قراردیں موجود ہیں لیکن بدقسمتی سے عالمی طاقتوں کا دوہرے معیار سے مسئلہ کشمیر حل نہیں ہو سکا۔ ان کا کہنا تھا کہ مودی سرکار نے مذہب کے تعصب کی انتہا کر دی ماضی میں بھی مذہبی تعصب کی آڑ میں مودی نے بھارتی گجرات میں مسلمانوں کا قتل عام کیا تھا اور اب مقبوضہ کشمیر کی خصوصی حیثیت کو ختم کر کے اسے بھارتی یونین کا حصہ بنانا بھی اسی سوچ کا شاخسانہ ہے ۔ ان کا کہنا تھا کہ وقت آگیا ہے کہ پاکستان کو کشمیریوں کی اخلاقی اور سفارتی حمایت سے ایک قدم آگے آنا ہو گا اور جن ماؤں بہنوں اور بیٹیوں کی عزت سے کھیلا جا رہا ہے ان بھارتی درندوں کو ایسا سبق سکھایا جائے کہ تاقیامت تاریخ یاد رکھے ۔ان کا کہنا تھا کہ پاکستان کو اب مقبوضہ کشمیر پر حملہ کر دینا چاہیے تاکہ کشمیری ماؤں بہنوں اور بیٹیوں کی عزت محفوظ ہو سکے اور کشمیری قوم آزادی سے سکھ کا سانس لے۔ قاری خادم حسین چشتی نے امت مسلمہ کے اتحاد و اتفاق اور دنیا میں مظلوم لوگوں کی داد رسی کے لیے خصوصی دعا کی۔