مقبول خبریں
بین الاقوامی میڈیا نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی جارحیت کی کلی کھول دی ہے:سردار مسعود خان
ڈیبی ابراھم کی قیادت میں ممبران پارلیمنٹ اور کمیونٹی رہنماؤں کی لارڈ طارق احمد سے ملاقات
جموں کشمیر تحریک حق خود ارادیت برطانیہ و یورپ میں کانفرنسز اورسیمینارز منعقد کریگی : راجہ نجابت
قومی متروکہ وقف املاک بورڈ کا سربراہ پاکستانی ہندو شہری کو لگایا جائے:پاکستان ہندوکونسل کا مطالبہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
سید حسین شہید سرور کی وزیراعظم آزاد کشمیر راجہ فاروق حیدر اور شاہ غلام قادر سے ملاقات
پارک ویو کمیونٹی سنٹر شہیر واٹر میں ہمنوا یو کے کے زیرِ اہتمام یوم آزادی پاکستان تقریب کا انعقاد
9ستمبر کو اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کے باہر بھرپور مظاہرہ کرینگے:راجہ نجابت حسین
سوچنے کے موسم میں سوچنا ضروری ہے!!!!!!!!
پکچرگیلری
Advertisement
ایسٹرن پویلین ہال اولڈہم میں سیو دی مدر ٹرسٹ کے زیر اہتمام چیریٹی ڈنر کا اہتمام
اولڈہم (محمد فیاض بشیر)سیو دی مدر ٹرسٹ (save the mother trust) کے تیسرے سالانہ چیرٹی ڈنر کا اہتمام اولڈہم کے ایسٹرن پویلین ہال میں منعقد ہوا جس میں نشید گروپ شام ،اسماعیل حسین کے علاوہ پروجیکٹ مینیجر محمد شاہد، شیخ محمد ایوب اصف، شیخ محمد اسماعیل اصف، شیخ محمد ابراہیم اصف نے شرکت کی ۔ کمیونٹی نے خیراتی کام میں بڑھ چڑھ مالی امداد کی۔ نقابت کے فرائض آمین ڈاڈا اور ابرار حسین نے سر انجام دے۔ اس موقع پر پروجیکٹ مینیجر محمد شاہد نے کہا کہ ہم بے شمار پروجیکٹس پر کام کر رہے ہیں اور چیرٹی کا مقصد مغربی افریقہ کے ممالک میں بے آسرا افراد کو چھت فراہم کرنا ہے ۔ آمین ڈاڈا نے کہا کہ دنیا بھر میں جو افراد امداد دے رہے ہیں ان سے درخواست ہے کہ وہ مالی مدد جاری رکھیں تاکہ بے سہارا افراد کی مدد جاری رکھ سکیں ۔ ابرار حسین کا کہنا تھا کہ یہ تیسرا سالانہ چیرٹی ڈنر ہے کمیونٹی نے دل کھول کر عطیات دے ان کا کہنا تھا کہ گریٹر مانچسٹر میں رہنے والی کمیونٹی خیراتی کاموں میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیتی ہے۔ چیرٹی ڈنر میں شریک رضا کار زینب نے کہا کہ ہم بے شمار پروجیکٹس پر کام کر رہے ہیں اور اب ہم ویسٹ افریقہ میں غریب نادار اور گلیوں میں بھٹکنے اور بھیگ مانگنے والے بچوں کی مدد کے لیے رقم جمع کر رہے ہیں۔ تقریب میں شرکت کرنے والی حرا کا کہنا تھا کہ ہم سب کو سیو دی مدر ٹرسٹ کی بھرپور مالی مدد کرنی چاہیے کیونکہ یہ دنیا بھر میں بے سہارا نوجوانوں کی مدد کرتے ہیں۔ شام گروپ اور اسماعیل حسین نے حمدیہ نعتیہ کلام پیش کر کے تقریب میں روحانی ماحول پیدا کر دیا۔