مقبول خبریں
اولڈہم کے نوجوانوں کی طرف سے روح پرور محفل، پیر ابو احمد مقصود مدنی کی خصوصی شرکت
کشمیر انسانی حقوق کی پامالیوں کا گڑھ ،اقوام عالم نوٹس لے، بھارت پر دبائو بڑھائے: فاروق حیدر
بھارت اپنے توپ و تفنگ سے اب کشمیری عوام کے جذبہ حریت کو دبا نہیں سکتا:بیرسٹر سلطان
تین طلاقوں پر سزا، اسلامی نظریاتی کونسل کا وسیع پیمانے پر مشاوت کا فیصلہ
مقبوضہ کشمیر میں بھارتی افواج کی فائرنگ سے شہری شہید، حریت رہنماؤں کی شدید مذمت
لوٹن میں بھی پی ٹی آئی کی کامیابی کا جشن، ڈھول کی تھاپ پر سڑکوں پر رقص اور بھنگڑے
آکاس انٹرنیشنل کی جانب سے پیرس فرانس میں پہلے یورپین فیملی فنگشن کا انعقاد
کشمیریوں کو حق خود ارادیت دیا جانا چاہیے تاکہ وہ اپنے مستقبل کا فیصلہ کر سکیں : مقررین
آدمی کو زندگی کا ساتھ دینا چاہیے!!!
پکچرگیلری
Advertisement
ہنر مند اور تربیت یافتہ ایشیائی کری شیف برطانیہ بلانےمیں آجروں کی مدد کی جائے گی:کیمرون
لندن ... برطانوی وزیر اعظم ڈیوڈ کیمرون نے پاکستان، بنگلہ دیش اور انڈیا سے ریسٹورنٹ اندسٹری میں مہارت کے حامل ہنرمندوں کو برطانیہ میں کام کے ترجیحی ویزے دینے کا اشارہ کیا ہے۔ لندن میں منعقدہ ایشیائی کھانوں کے سالانہ مقابلے "برٹش کری ایوارڈ" کی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ ان ممالک کے شیف حضرات نے برطانیہ کو پہلے ہی اپنے ذائقے کی گرفت میں لے رکھا ہے۔ واضع رہے کہ یورپ میں ایشیائی سالن کو "کری" اور اسے تیار کرنے والے کو "شیف" کہا جاتا ہے۔ تقریب میں خطاب کرتے ہوئے برطانوی وزیراعظم نے کہاکہ برطانیہ کی کری ڈشز نے جنوبی ایشیا کو بھی پیچھے چھوڑ دیا ہے جہاں سے یہ ڈشز شروع ہوئی تھیں ۔ انہوں نے کہاکہ کری برطانوی شناخت کا حصہ بن چکی ہے اورحکومت اس انڈسٹری کے مخصوص مسائل مثلاً بھارت، پاکستان، بنگلہ دیش جیسے مقامات سے شیفس کی ریکروٹنگ سےنمٹنے میں مدد دے گی۔ انہوں نے کہا میں جانتا ہوں کہ امیگریشن اور ضرورت کے مطابق درکار تجربہ کار شیفس کے حوالے سے دوسری انڈسٹریز کی طرح اس انڈسٹری کو بھی مخصوص چیلنجز کا سامنا ہے۔ ہم اس مسئلے سے نمٹنے کیلئے مل کر کام کریں گے اور آپ لوگوں کے آبائی ممالک سےآپکی ضرورت کے مطابق درکار ایشین سکلڈ شیفس کی خدمات کے حصول میں مدد دیں گے۔ وزیر اعظم نے یہ بھی عزم کیا کہ اپرنٹس شپس اور سکالر شپس کے ذریعے ملکی شیفس کو تربیت دی جائے گی اور سرمایہ کاری کی جائے گی۔ برٹش کری ایوارڈز کی تقریب کا اہتمام برطانیہ میں کری انڈسٹری کی معروف شخصیت انعام علی ایم بی ای نے کیا تھا جبکہ شوبز کے معروف ستاروں نے نظامت بھی کی اور اپنے اپنے فن کا جادو بھی جگایا۔ تقریب میں کری اندسٹری سے تعلق رکھنے والے ایشیائی اور برطانوی بزنس مین کی کثیر تعداد شامل تھی جبکہ ممبران اسمبل، مئیرز، کونسلرز اور ان ممالک کے سفارتی مہمانوں کو بھی مدعو کیا گیا تھا۔ تقریب میں مختلف کیٹیگریز میں ایوارڈز بھی تقسیم کیے گئے اور مہمانوں کو تجربہ کار شیفوں کے ہاتھوں تیار کردہ تازہ دیسی کھانا کھلایا گیا۔